مذاکرات کیلئے دونوں فریق سنجیدہ نہیں، ایسی صورتحال رہی تو مذاکرات سے علیحدہ ہو جائیں گے: مولانا سمیع الحق

مذاکرات کیلئے دونوں فریق سنجیدہ نہیں، ایسی صورتحال رہی تو مذاکرات سے علیحدہ ...
مذاکرات کیلئے دونوں فریق سنجیدہ نہیں، ایسی صورتحال رہی تو مذاکرات سے علیحدہ ہو جائیں گے: مولانا سمیع الحق

  

پشاور (مانیٹرنگ ڈیسک) طالبان مذاکراتی کمیٹی کے رکن مولانا سمیع الحق نے کہا ہے کہ مذاکرات کیلئے دونوں فریق سنجیدہ نہیں لگ رہے اور ٹال مٹول سے کام لے رہے ہیں، صورتحال یہی رہی تو ہمیں مذاکرات سے لاتعلقی کا اعلان کرنا پڑے گا۔ میڈیا رپورٹس کے مطابق مولانا سمیع الحق کا کہنا تھا کہ ہم ثالث ہیں اور امن چاہتے ہیں، طالبان سے صبر و تحمل سے کام لینے کا کہتا ہوں، طالبان اور حکومت سے رکاوٹیں دور کر کے آگے بڑھنے کی اپیل کرتا ہوں، امن کیلئے سب کو ایک پلیٹ فارم پر متحد ہونا ہو گا۔ انہوں نے کہا کہ غاروں میں بیٹھے جنگجوﺅں سے رابطہ ہوتا ہے تو اسلام آباد والوں سے نہیں ہوتا، دونوں فریقین مذاکرات کیلئے سنجیدہ نظر نہیں آ رہے، ایسی صورت میں ہمیں مذاکرات سے الگ ہونا پڑے گا۔ مولانا سمیع الحق نے کہا کہ قبائلی صرف اور صرف امن چاہتے ہیں اورمذاکرات کی پشت پر ہیں جبکہ تمام قبائلی مذاکرات کی مکمل حمایت کرتے ہیں، امن کیلئے قبائلیوں نے بے پناہ قربانیاں دی ہیں۔

مزید : پشاور /اہم خبریں