ایک بیٹری جو 50سال چلے گی

ایک بیٹری جو 50سال چلے گی
ایک بیٹری جو 50سال چلے گی

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

نیویارک (بیورورپورٹ) موبائل فون ہوں یا لیپ ٹاپ، کھلونے ہوں یا بڑی بڑی گاڑیاں، بیٹری کے بغیر کسی بھی چیز کا چلنا ناممکن ہے اور بیٹری کو ری چارج کرنا اور طویل عرصے تک قابل استعمال رکھنا ہمیشہ سے ایک اہم مسئلہ رہا ہے۔ ایک انتہائی اہم امریکی تحقیق سے اس بات کی امید پیدا ہوگئی ہے کہ عنقریب ہمیں ایسی بیٹریاں میسر آجائیں گی کہ جو 50 سال تک کی ناقابل یقین مدت تک صرف ایک بار چارج کرنے سے چل سکیں گی۔'اوک رج نیشنل لیبارٹری' کے سائنسدانوں نے حالیہ تجربات  کے بعد ایک نئی قسم کی بیٹری تیارکرنے کا دعوی کیا ہے جس کا الیکٹرولائٹ روایتی بیٹری کے برعکس دوہرا فنکشن سرانجام دے گا۔ یعنی یہ نہ صرف کرنٹ پیدا کرے گا بلکہ جب بیٹری کا چارج کم ہورہا ہوگا تو ایک مخصوص مارے سے یہ دوبارہ چارج ہونا شروع ہوجائے گی۔ امید کی جاری ہے کہ اس بیٹری کے استعمال سے ہر قسم کے آلات کو ایک طویل مدت تک توانائی فراہم کی جاسکے گی۔

مزید : سائنس اور ٹیکنالوجی