خوشحال گڑھ کے مقام پر دو آئل ریفائنریز بنائی جا رہی ہیں:شہریار آفریدی

خوشحال گڑھ کے مقام پر دو آئل ریفائنریز بنائی جا رہی ہیں:شہریار آفریدی

کوھاٹ (بیورو رپورٹ) ممبر قومی اسمبلی شہریار آفریدی نے کہاہے کہ ضلع کوھاٹ میں خوشحال گڑھ کے مقام پر دوآئل ریفائنریز بنائی جارہی ہیں جو 2019 ء کے اوائل میں مکمل ہوجائیں گی دونوں آئل ریفائنریز سے لاکھوں افراد کو روزگار فراہم ہوگا جبکہ کوھاٹ مزید ترقی پر گامزن ہوجائیگا دونوں آئل ریفائنریز کوھاٹ کی خوشحالی میں کردار ادا کریں گی۔صوبہ خیبر پختونخوا کے جنوبی اضلاع معدنی وسائل سے مالا مال ہیں۔جہاں تیل و گیس کے وافر ذخائر ہونے کی وجہ سے بیرونی سرمایہ کار سرمایہ کاری کے لیے تیار ہیں۔یہ سب پاک فوج کی بدولت ممکن ہوا۔جس نے علاقے میں ہر طرح کا امن و امان قائم کر کے دنیا کو ایک مثبت پیغام دیا۔جس کے باعث بیرونی سرمایہ کار یہاں کھینچے چلے آ رہے ہیں۔یہ صوبہ بیرونی سرمایہ کاروں کے لیے سونے کی چڑیا ثابت ہو گا۔کے پی کے حکومت بیرونی سرمایہ کاروں کو بغیر کسی دُشوار مراحل کے اُنہیں اجازت دے گی۔یہ بات انرجی سٹینڈنگ کمیٹی کے ممبر اور کوہاٹ سے پی ٹی آئی کے ایم این اے شہریار آفریدی نے ڈپٹی کمشنرکوہاٹ کے دفتر میں میڈیا کوبریفنگ دیتے ہوئے کہی۔اس موقع پرروس سے تعلق رکھنے والے سرمایہ کار مسٹر مکینزی،یونائیٹڈ آئل ریفائنری،اورخیبر آئل ریفائنری کے حکام ،ضلعی ناظم نسیم آفریدی،پی ٹی آئی ساوئتھ ریجن کے جنرل سیکرٹری ملک اقبال،ضلعی صدر آفتاب عالم اور دیگربھی موجود تھے۔اُنہوں نے کہا کہ کوہاٹ میں دو آئل ریفائنریوں کے قیام سے یہاں کے عوام خوشحال ہونے کے ساتھ ساتھ علاقہ بھی ترقی کرے گا۔جہاں تعلیم،صحت،آبنوشی اور دیگر بنیادی ضروریات میسر ہونگی۔اُنہوں نے کہا کہ صوبہ کے پی کے کی حکومت بیرونی سرمایہ کاروں کی آسانی کے لئے ون ونڈو سروس کے ذریعے تمام سہولیات فراہم کرے گی۔تاکہ بیرونی سرمایہ کاروں کو کوئی مشکل درپیش نہ ہو۔جبکہ بیرونی سرمایہ کار کسی ہچکچاہٹ کے سرمایہ کاری کے لیے تیار بیٹھے ہیں۔جن کے لیے صوبہ کے پی کے سونے کی چڑیا ثابت ہوگی۔شہریار آفریدی نے کہا کہ آئل ریفائنریوں کے قیام سے یہاں کے ہزاروں لوگوں کو روزگار ملے گا۔جس سے علاقے میں خوشحالی کا دور دورہ ہوگا۔اسکے علاوہ یہاں تکنیکی ادارے بھی قائم کیئے جائیں گے۔جہاں لوگ مختلف ہُنر سیکھیں گے۔اور اپنے آمدن میں اضافہ کرینگے۔اُنہوں نے کہا کہ یہ تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان کے وژن اور وزیر اعلی پرویز خٹک کے مرہون منت ہے۔جنہوں نے ایک نئے پاکستان کی بنیاد رکھتے ہوئے صوبہ کے پی کے کو ترقی کی دوڑ میں شامل کر دیاہے۔اس موقع پر روس کے سرمایہ کار مسٹر مکینزی نے کہا کہ صوبہ کے پی کے کے جنوبی اضلاع میں معدنی ذخائر کی کوئی کمی نہیں۔یہاں تیل و گیس کے وافر ذخائر ہیں۔جہاں روس اور ہانگ کانگ کے سرمایہ کار گہری دلچسپی رکھتے ہیں۔واضح رہے کہ کوہاٹ میں قائم ہونے والے دونوں آئل ریفائنریاں چالیس ہزار بیرل تیل یومیہ صاف کریں گی۔جس میں مزید اضافہ کیا جا سکے گا۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر


loading...