سخاکوٹ میں جماعت اسلامی کو دھچکا ،درجنوں کارکن مستعفی

سخاکوٹ میں جماعت اسلامی کو دھچکا ،درجنوں کارکن مستعفی

سخاکوٹ( نمائندہ پاکستان) یونین کونسل سیلئی پٹے محلہ سورے غاڑہ اور محلہ الوگئی میں پی پی پی اور جماعت اسلامی کے درجنوں کارکنوں کی اے این پی میں شمولیت کا اعلان۔جن افراد نے شمولیت اختیار کی ۔ان میں حضرت ولی، حضرت علی، جنت گل، یاد کریم، گل مودین، صابط گل، عثمان علی، غنچہ گل، نظام، خان اللہ لالا، بختیار، شوکت، خائستہ گل، زیارت گل، شاہ نواز، شاہ رخ خان، امجد اللہ، نورجمال، عظمت گل، تازہ گل، بلال، خائستہ خان، جاوید، حمید، ارشد، زبیر، اکبر حسین، فدا حسین، وزیرزادہ، شکور خان، سجاد خان، لعل بادشاہ، عثمان، امجد خان، طور گل، سحرگل، وحیدگل، علی خان، فائدگل، حضرت خان، فائید خان، واجد، عابد اللہ، گران جان، فضل محمد، خان محمد، نیاز محمد، بخت محمد، ولی محمد، شہریار، عباس خان، حافظ اللہ، لعل زرین، محمد علی، اکرام اللہ، حیات حسین، اقبال حسین اور محمد حسین شامل ہیں۔ اس موقع پر الگ الگ شمولیتی اجتماعات سے خطاب کرتے ہوئے عوامی نیشنل پارٹی ضلع ملاکنڈ کے صدر ونامزد امیدوار صوبائی اسمبلی شفیع اللہ نے کہا کہ صوبہ خیبر پختونخوا کے عوام نے ہمیشہ جذبات میں اکر فیصلے کئے ہے جس پر بعد میں وہ پشیمان ہوچکے ہیں۔صوبہ خیبر پختونخوا ایک تجربہ گاہ بنا ہو ا ۔کسی نے روٹی کپڑامکان، کسی نے اسلام کے اور گذشتہ انتخابات مین تبدیلی کے نام پر ووٹ لیکر پختونوں کو ورغلایا۔اگر پختون اب بھی خواب غفلت سے بیدار نہیں ہوئے تو تاریخ انہیں کبھی معاف نہیں کریگی۔شمولیتی اجتماعات سے اے این پی ضلع ملاکنڈ کے نائب صدر گل زمین گلے، ملگری استاذان ضلع ملاکنڈجنرل سیکرٹری سیدمحمود، یوسی سی سلےئی پٹے کے صدر سیدبادشاہ، سلیم الدین، ولایت خان ، بختیار خان، جلات خان اور کونسلر سید نعما ن نے بھی خطاب کیا۔

مزید : پشاورصفحہ آخر


loading...