تفضل رضوی کیخلاف نازیبا گفتگوپرشعیب اختر کوہرجانے کا نوٹس

  تفضل رضوی کیخلاف نازیبا گفتگوپرشعیب اختر کوہرجانے کا نوٹس

  

لاہور (نامہ نگار خصوصی)سابق فاسٹ باولر شعیب اختر وکلا کے نشانے پر آگئے ہیں،پاکستان بار کونسل کے بعد لاہور ہائی کورٹ بار نے بھی پی سی بی کے لیگل ایڈوائیزر تفضل رضوی کے خلاف نازیبا گفتگو کرنے پر شعیب اختر سے معافی مانگنے کا مطالبہ کر دیا ہے جبکہ ایک مقامی وکیل یاورذوالفقار نے شعیب اختر کو ساڑھے 4 کروڑ روپے ہرجانہ کی ادئیگی کے لئے کا لیگل نوٹس بھجوا دیا ہے۔لاہور ہائی کورٹ بار کی طرف سے جاری بیان میں شعیب اختر کے بیان کی شدید مذمت کرتے ہوئے ان سے معافی مانگنے کا مطالبہ کیا گیا ہے، دوسری طرف اپنے لیگل نوٹس میں یاور زوالفقار ایڈووکیٹ نے کہا کہ شعیب اختر نے اپنے بیان میں وکلا کی تضحیک کی ہے،ان کا یہ بیان کسی صورت قابل قبول نہیں ہے،اس سے وکلا کی ساکھ متاثر جبکہ وکلا برادری کی توہین کی ہوئی ہے۔شعیب اختر چودہ روز میں وکلا سے غیر مشروط معافی مانگیں،بصورت دیگر انکے خلاف عدالت میں کیس دائر کیا جائے گا۔

نوٹس

مزید :

صفحہ آخر -