زراعت کی ترقی حکومت کی ترجیحات میں شامل ہے، سید فخر امام

  زراعت کی ترقی حکومت کی ترجیحات میں شامل ہے، سید فخر امام

  

کبیروالا(تحصیل رپورٹر)وفاقی وزیر برائے نیشنل فوڈ سیکورٹی سید فخر امام نے سید گروپ کے رہنمامخدوم سید سید باقر سلطان گردیزی سے ٹیلی فون پر گفتگو کرتے ہوئے کہا ہے کہ ماضی میں زرعی شعبے کو نظر انداز کیا گیا، زراعت کی ترقی موجودہ حکومت کی ترجیحات میں شامل ہے،ملک میں خوردنی تیل کے سوا 90 فیصد اشیائے خوردونوش تیار ہورہی ہیں اور حکومت(بقیہ نمبر33صفحہ6پر)

نے عوام کی سہولت کے لئے رمضان پیکج کے لئے 50 ارب روپے رکھے ہیں۔ ملکی تاریخ میں پہلی مرتبہ وفاقی حکومت نے غریبوں اور ضرورت مندوں کے لئے ایک بھاری مالی امداد کا اعلان کیا ہے، اس رقم سے 12ملین خاندانوں کو سہولت حاصل ہوگی،جن میں احساس پروگرام کے تحت اقساط میں رقوم تقسیم کی جارہی ہے اور ہر خاندان کو12ہزار روپے ملیں گے۔ ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ پوری دنیا کو کورونا وائرس کی وبا کا سامنا ہے جس پر کنٹرول کرنے کی کوشش کر رہی ہے اور حکومت،عوا م کو ”کرونا وائرس“سے ور ”بھوک“ سے بچانے کے لئے ہر ممکن مختلف اقدامات کو یقینی بنارہی ہے۔انہوں نے بتایا کہ وزیراعظم عمران خان کی ہدایات پر گندم کی سمگلنگ کی روک تھام، ٹڈی دل کے خاتمے اور آئندہ سال معیاری گندم کی پیداوار حاصل کرنے کے لیے بہتر بیج کے استعمال کے حوالے سے تجاویز کے تناظر میں خصوصی انتظامات اور مستقل بنیادوں پر مشتمل اقدامات کئے جائیں گے۔انہوں نے کہا کہ حکومت سمگلنگ خصوصاً گندم و دیگر اشیائے خوردونوش کی سمگلنگ کی موثر روک تھام کے لئے پرعزم ہے، ذخیرہ اندوزی اور سمگلنگ کے تدارک کے لئے حکومت کی جانب سے آرڈیننس متعارف کرایا جا رہا ہے، جس سے ایسی کاروائیوں میں ملوث عناصر اور افراد کے خلاف سخت قانون کا اطلاق یقینی بنایا جا سکے گا۔وفاقی وزیر قومی تحفظ خوراک سید فخرامام کا کہنا ہے کہ موجودہ صورتحال خصوصاً ماہ رمضان کے پیش نظر گندم اور دیگر اشیائے ضروریہ کی طلب و رسد پر گہری نظر رکھی جارہی ہے تاکہ ملک کے کسی حصے میں خوراک کی کمی درپیش نہ ہو۔

فخرامام

مزید :

ملتان صفحہ آخر -