عوام کو جنوبی پنجاب سیکرٹریٹ کے بجائے علیحدہ صوبہ چاہئیے، یوسف رضا گیلانی

عوام کو جنوبی پنجاب سیکرٹریٹ کے بجائے علیحدہ صوبہ چاہئیے، یوسف رضا گیلانی

  

 ملتان   (سٹاف رپورٹر)سابق وزیراعظم و قائد حزب اختلاف سینیٹ سیّد یوسف رضا گیلانی نے کہا ہے کہ موجودہ حکمران جنوبی پنجاب کی عوام کو بیوقوف نہ سمجھیں کیونکہ یہاں کی عوام کو جنوبی پنجاب سیکرٹریٹ کا لالی پاپ نہیں بلکہ مکمل علیحدہ صوبہ چاہیئے جس کی اپنی اسمبلی، اپنا وزیراعلیٰ، اور اپنی کابینہ ہو جو تمام جمہوری اختیارات بھی رکھتے ہوں جبکہ سرائیکی خطے کی عوام کی طرف سے محض سیکرٹریٹ کا مطالبہ کبھی نہیں رہا اور اگر موجودہ حکومت واقعی علیحدہ صوبہ بنانے میں مخلص ہے تو پھر قومی اسمبلی اور سینٹ سے منظور کروائی گئی ہماری قرارداد سے استفادہ حاصل کرے اور علیحدہ صوبہ کی تکمیل کیلئے قدم بڑھائے اگر ہماری ضرورت ہوگی حاضر ہونگے کیونکہ ہمیں اپنے دور اقتدار میں اگر قومی اسمبلی میں دو تہائی اکثیریت حاصل ہوتی تو علیحدہ صوبہ بھی بن چکا ہوتا ان خیالات کا اظہار انہوں نے کینٹ ملتان میں عمارت کی افتتاحی تقریب میں میڈیا نمائیندگان اور شرکاء سے گفتگو کرتے ہوئے کیااس موقع پر ممبر قومی اسمبلی نوید عامر جیوا، سابق ممبر پنجاب اسمبلی عثمان بھٹی، پیپلز یوتھ آرگنائزیشن جنوبی پنجاب کے صدر سیّد عارف شاہ، سٹی صدر مسلم لیگ (ن) رانا شاہدالحسن، ڈپٹی سیکرٹری انفارمیشن پاکستان پیپلز پارٹی ملتان ڈسٹرکٹ رئیس الدین قریشی، سٹی نائب صدر پیپلز پارٹی نعیم بھٹی، سٹی صدر پی۔وائی۔او محمد علی نومی بھٹہ، معروف سماجی رہنما قاری عبدالرؤف قریشی، رہنما مسلم لیگ (ن) شیخ عمران لیاقت، پیپلز پارٹی رہنما سیف علی بھٹی، نعیم خان، ملک قاسم کھوکھر، مہر صفدر سیال، نجیب اللہ خان، رانا سجاد، رانا کامران، ملک تصوّر، ملک امتیاز تھہیم ایڈووکیٹ، ضیغم شہزاد، محِب مَلک  موجود تھے  دریں اثنا سید یوسف رضا گیلانی اپنی رہائش گاہ پر پارٹی کے مقامی عہدیاروں سے بھی ملاقاتیں کیں۔

گیلانی

مزید :

صفحہ اول -