کرونا نے مزید 9مریضوں سے زندگی چھین لی، متعدد نئے کیس رپورٹ 

کرونا نے مزید 9مریضوں سے زندگی چھین لی، متعدد نئے کیس رپورٹ 

  

ملتان، چوک اعظم، ڈیرہ، لودھراں، عبدالحکیم، میلسی، خانیوال، ٹبہ سلطان پور، گگو منڈی، ٹھٹھہ صادق آباد(خصوصی رپورٹر، نامہ نگار، سٹی رپورٹر، سپیشل رپورٹر، نمائندگان پاکستان) نشتر ہسپتال ملتان میں گزشتہ چوبیس گھنٹوں کے دوران کورونا میں مبتلا 09 مزید مریض جاں بحق ہوگئے،اموات کی مجموعی  تعداد 642 تک جاپہنچی۔  زیر علاج کورونا کے مریضوں کی  تعداد 118،24مریضوں کی حالت تشویشناک،  شبہ میں 87 مریض نشتر داخل،کورونا آئی سو لیشن وارڈ مریضوں سے بھر گیا،کورونا آئی سو لیشن کے دس وارڈز میں بستروں کی تعداد بڑھا  کر 317 کر دی گئی، 284 پر مریض،80 وینٹی لیٹرز میں سے صرف 03خالی رہ گئے۔ذرائع سے معلوم ہوا ہے   نشتر ہسپتال کے آئی سو لیشن وارڈز میں ملتان کی 55 سالہ پارس بی بی 78 سالہ محمد یاسین،60 سالہ شہباز طفیل 60 سالہ ارشاد بی بی سیالکوٹ کی 40 سالہ آئشہ 50 سالہ احسان اللہ، بھکر کی 30 سالہ اظہرہ بی بی،وہاڑی کی 55 سالہ شریفاں بی بی اور جھنگ کی 50 سالہ سکینہ بی بی  نے دم توڑ دیا،یوں یکم اپریل 2020  سے 30 اپریل 2021 کے درمیان کورونا کے باعث ہونے والی اموات کی مجموعی تعداد 642 ہو گئی ہے،جبکہ نشتر ہسپتال میں زیر علاج کورونا کہ مریضوں کی تعداد 118ہو گئی ہے جن میں سے 70 مریضوں کا تعلق ملتان سے ہے جبکہ زیر علاج 24 مریضوں  کی حالت تشویشناک  ہے، کورونا کے شبہ میں 87مریض زیر علاج ہیں جن کی رپورٹس کا انتظار  ہے،ادھر رواں سال نشتر ہسپتال میں کورونا کے شبہ میں 5 ہزار 617 افراد رپورٹ ہوئے جن میں سے 2 ہزار 147 افراد میں کورونا کی تصدیق ہوئی ہے،ادھر نشتر ہسپتال کا کورونا آئی سو لیشن وارڈ مریضوں سے بھر گیا ہے جہاں اس وقت 284 مریض زیر علاج ہیں  جبکہ 80 وینٹی لیٹرز میں سے صرف 03 خالی رہ گئے ہیں جبکہ کورونا آئی سو لیشن بلاک میں بستروں کی تعداد 294 سے بڑھا کر 317کر دی گئی ہے،جن میں سے 33 بستر خالی ہیں ملتان شہر میں 5 نئے کورونا ویکسی نیشن سنٹر قائم کرنے کا فیصلہ کر لیا گیا ہے۔سپورٹس جمنازیم،ورکر ویلفئیر سکول لودھی کالونی کی بلڈنگ،ہوم اکنامکس کالج مدنی چوک،گرلز ڈگری کالج شاہ رکن عالم اور کامرس کالج قاسم پور کالونی کی عمارت میں نئے ویکسی نیشن سنٹر قائم کئے جائیں گے۔ڈپٹی کمشنر علی شہزاد نے گزشتہ روز مجوزہ ویکسی نیشن سنٹرز کا دورہ کیا۔ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر ریونیو محمد طیب خان،اسسٹنٹ کمشنر سٹی خواجہ عمیر محمود اور ڈی ایچ او ڈاکٹر محمد علی مہدی بھی انکے ہمراہ تھے۔ ڈپٹی کمشنر نے ویکسی نیشن رومز اور آبزرویشن رومز قائم کرنے کے لئے مختلف کمروں کا جائزہ لیا۔شہریوں کی سہولت کے لئے پارکنگ ایریا کا بھی معائنہ کیا۔اس موقع پر گفتگو کرتے ہوئے ڈپٹی کمشنر علی شہزاد نے بتایا کہ حکومت کورونا ویکسی نیشن کے عمل کو تیز کرنا چاہتی ہے،پڑوسی ملک بھارت میں کورونا کی صورتحال نے ہمیں الرٹ کر دیا ہے۔کورونا وائرس کی چین کو توڑنے کی کوشش کی جارہی تاکہ مریضوں کی شرح میں کمی لائی جا سکے۔ اسی لئے حکومت سمارٹ لاک ڈاون اور کورونا ویکسی نیشن دونوں محاذوں پر متحرک ہے۔ڈپٹی کمشنر کی نئے ویکسی نیشن سنٹرز جلد فعال کرنے کی ہدایت کی۔ڈی ایچ او ڈاکٹر سید محمد علی مہدی نے اس موقع پر ڈپٹی کمشنر کو بریفنگ دیتے ہوئے بتایا کہ تقریبا'' 80 ہزار شہری ویکسی نیشن کے لئے اپنی رجسٹریشن کرا چکے ہیں اور اب تک 21ہزار763 شہریوں کو پہلی جبکہ 7ہزار 106 شہریوں کو کورونا ویکسین کی دوسری ڈووز دے دی گئی ہے۔انہوں نے بتایا کہ 10ہزار611 ہیلتھ ورکرز کو پہلی جبکہ 7044ورکرز کو کورونا ویکسین کی دوسری ڈوز فراہم کردی گئی ہے۔کورونا وبا کی تیسری لہر میں ہسپتالوں میں ڈاکٹروں،نرسوں و پیرا میڈیکل سٹاف کی شدید کمی ہوگئی ہے۔محکمہ سپیشلائزڈ ہیلتھ کئیر اینڈ میڈیکل ایجوکیشن پنجاب نے نشتر ہسپتال میں کنسلٹنٹ ڈاکٹروں،مرد و خواتین میڈیکل آفیسرز،نرسوں،پیرا میڈیکل سٹاف کی بھرتی کی اجازت دیدی ہے۔پلمونالوجی،آئی سی یو کیئر،انستھیزیا،میڈیسن،وبائی امراض کے کنسلٹنٹ ڈاکٹروں،مرد و خواتین میڈیکل آفیسرز،مائکروبیالوجسٹ،چارج نرس،ریسپائریٹری تھراپسٹ،ٹیکنالوجسٹ انستھیزیا،ٹیکنالوجسٹ پتھالوجی،لیب ٹیکنیشن،ایکسرے ٹیکنیشن،ای سی جی ٹیکنیشن کی بھرتی ہوگی۔جن کے واک ان انٹرویوز نشتر میڈیکل کالج ملتان کے پرنسپل دفتر میں ہر پیر کو صبح دس بجے سے دوپہر ایک بجے تک ہوں گے۔یہ بھرتی تین ماہ مدت کے لئے کورونا وبا سے نمٹنے کے لئے ہوگی۔جنہیں 39 ہزار 414 روپے سے لیکر ایک لاکھ 47 ہزار 555 روپے ماہانہ مشاہرہ دیا جائے گا نشتر ہسپتال میں کورونا مریضوں کا بڑھتا دباو،پی ایم اے ملتان کے وفد کی ایم ایس نشتر ہسپتال سے ملاقات،ہاوس جاب میں ایکسٹینشن صرف از خود تیار امیدواروں سے کروائی جائے،خراب وینٹی لیٹرز ٹھیک کروائے جائیں،کورونا مریضوں کو مفت ادویات انجکشن کی فراہمی اور سہولیات میں اضافے کا بھی مطالبہ ایم ایس کی جانب سے تمام مسائل جلد حل کی یقین دہانی تفصیل کے مطابق پی ایم اے ملتان کے وفد نے صدر پروفیسر ڈاکٹر مسعود الروف ہراج کی قیادت میں گزشتہ روز ایم ایس نشتر ہسپتال ڈاکٹر شاہد بخاری سے ملاقات کی اس موقع پر انہیں کہا گیا کہ ہاوس جاب میں  ایکسٹینشن  طلبا کی صوابدید پر ہونا چاہئے جس پر ایم ایس نشتر ہسپتال نے کہا کہ سیکرٹری ہیلتھ پنجاب کے نوٹیفکیشن کے مطابق 06 روز کے اندر جو امیدوار ہاوس جاب میں توسیع چاہیں گے انہی کی ہاوس جاب میں توسیع کی جائیگی جبکہ اس موقع پر پی ایم اے کے وفد نے کورونا مریضوں کے بڑھتے ہوئے بوجھ کو سنبھالنے کے لئے نشتر ہسپتال میں خراب پڑے پچاس کے قریب وینٹی لیٹرز کو ٹھیک کروانے اور کورونا مریضوں کے لئے سہولیات میں اضافے سمیت ادویات و انجکشن کی مفت فراہمی جبکہ آکسیجن کی بلا تعطل  فراہمی کو بھی یقینی بنایا جائے جس پر ایم ایس نشتر ہسپتال نے جلد تمام مسائل کے حل کی یقین دہانی کروائی,ادھر وفد میں ڈاکٹر رانا خاور, ڈاکٹر طارق وقار, ڈاکٹر شیخ عبد الخالق, ڈاکٹر ذوالقرنین حیدر اور دیگر موجود تھے وزیر اعلی پنجاب عثمان بزدار کی کورونا کے بڑھتے ہوئے کیسز پر اظہار تشویش۔انتظامیہ کو کورونا ایس او پیز اور مخصوص ایام میں لاک ڈاؤن پر مکمل عملدرآمد کی ہدایت۔ ضلعی انتظامیہ لیہ کورونا کے پھیلاؤ کو روکنے کے لیے متحرک۔ اسسٹنٹ کمشنر نیاز احمد مغل نے اس سلسلہ میں مختلف مقامات کا دورہ کیا اور لاک ڈاؤن کی صورتحال کا جائزہ لیا۔ اسسٹنٹ کمشنر نے اس دوران جنرل بس سٹینڈ میں لاک ڈاؤن کی خلاف ورزی پر 12 دکانیں سیل کر دیں۔اسسٹنٹ کمشنر نے اس موقع پر کہا کہ کورونا ایس او پیز کی خلاف ورزی کسی صورت قبول نہیں اور زمہ داران کے خلاف قانونی کارروائی کی جائے گی۔ اسی طرح اسسٹنٹ کمشنر چوبارہ نے لاک ڈاؤن پر عملدرآمد کے لئے تحصیل چوبارہ کی مختلف مارکیٹوں کا دورہ کیا۔وزیر اعلی پنجاب سردار عثمان احمد خان بزدار کی ہدایت پر ضلع ڈیرہ غازیخان میں کورونا ایس او پیز،احترام رمضان آرڈیننس، لاک ڈاون اور ڈسٹرکٹ پرائس کنٹرول ایکٹ کے تحت کارروائی جاری ہے. اسسٹنٹ کمشنرتونسہ رابعہ سیال نے لاک ڈاون کی خلاف ورزی پر پانچ ہزار روپے جرمانہ اور کورونا ایس او پیز کی خلاف ورزی پر بارہ افراد کے خلاف مقدمات کے اندراج کیلئے استغاثہ جمع کرا دیا. اسسٹنٹ کمشنر صدر مہدی ملوف نے کورونا ایس او پیز کی خلاف ورزی پر الریحان کچن، عجوہ بیکری سمیت ہسپتال چوک اور گولائی کمیٹی میں پانچ دکانوں کو سربمہر کر دیا.  ماسک نہ پہننے پر 72 گھنٹوں کے دوران 92 افراد گرفتار، مقدمات بھی درج کر لئے  سرکل لودھراں میں 30،کہروڑپکا میں 32 اور دنیا پور میں 30 افراد گرفتار کئے اس موقع پر ۔ڈی پی او سید کرار حسین نے کہا کہ : نرمی کرکے دیکھ لیا اب قانون پوری قوت سے حرکت میں ہے۔اے سی کبیروالا خرم حمید نے عبدالحکیم میں لاک ڈاؤن اور ایس او پیز کی خلاف ورزی کرنے پر متعدددکانیں سیل کیں اوردکانداروں میں بسم اللہ بیکری کومبلغ5ہزار،مدنی فوٹوسٹیٹ 5ہزارروپے نقد جرمانہ کیا جبکہ شیخ پلاسٹک سٹور،تلمبہ روڈ پرایک آئرن سٹور اورمکہ مارکیٹ میں بھی 2دکانیں سیل کی گئیں۔اس کے علاوہ فنانس آفیسرراؤ ارشاد نے کچاکھوہ روڈ پر 2آٹوز کی دکانوں کو سیل کیا بعدازاں 2ہزارروپے جرمانہ وصول کرکے سیل کھول دی گئی،جبکہ ملتان روڈ پر شوز اور کلاتھ کی دکانوں کو بھی 2ہزارروپے جرمانہ کیا گیا۔بتایا گیا ہے کہ مذکورہ دکاندار ایس او پیز اور لاک ڈاؤن کی خلاف ورزی کے مرتکب پائے گئے۔ حکومت کی جانب سے شام 6 بجے کے بعد دکانیں اور مارکیٹس بند کرنے، اور ماسک پہن کر گھروں سے نکلنے کے احکامات کی خلاف ورزی پر میلسی پولیس حرکت میں آ گئی گذشتہ روز تھانہ سٹی میلسی پولیس نے محلہ ٹلو پورہ کے محمد عثمان، محمد صدیق اکبر کے محمد وسیم عثمان، محلہ غریب نواز کے محمد عمران، میلسی شہر کے محمد رضوان انصاری، کالونی چوک کے مختیار احمد، دھرم پورہ کے محمد شکیل، کرمپور کے روحید احمد، موضع دھلو کے محمد امین، تحصیل بازارکے محمد مستقیم، سرکلر روڈ کے غلام عباس، موضع گنب کے محمد فیروز، دھرم پورہ کے عبد الوحید عرف بابو، بستی رتھاں والی کے صداقت علی، حافظ آباد کے محمد اکرام، ضلع بھکر کے غضنفر عباس، مترو کے ثناء اللہ، بنگلہ صدیق کے ظفر اقبال، چک نمبر 100 ڈبلیو بی کے محمد امین، گڑھا موڑ کے محمد حکیم کو مختلف مقامات پر دکانیں کھولنے، ماسک نہ پہننے اور کورونا ایس او پیز کی خلاف ورزی پر گرفتار کرتے ہوئے سرکل پولیس نے مجموعی طور پر ڈیذیز ایکٹ کے تحت 17 مقدمات درج کر لیئے اور خلاف ورزی کے مرتکب ان افراد کو حوالات میں بند کر دیا۔کورونا ایس او پیز پر عمل نہ کرنے پر ٹرانسپورٹ کمپنیوں کے خلاف بھی ایکشن لینے کا سلسلہ جاری۔سیکرٹری آر ٹی اے رانا محسن نے کورونا ایس او پیز نظر انداز کرنے پر11 بسوں کو تحویل میں لے لیا جبکہ 23 بسوں کو چالان کردیا۔سیکرٹری آرٹی اے نے بس مالکان پر1لاکھ21ہزار روپے جرمانہ بھی عائد کیا۔ کورونا ایس او پیز پر عمل نہ کرنیوالوں پر مجموعی طور پر2لاکھ 71ہزار جرمانے عائد کئے گئے۔ڈپٹی کمشنر آغا ظہیر عباس شیرازی نے پابندی کے باجود نجی تعلیمی ادارے کھلنے کی شکایات کا سخت نوٹس لیتے ہو ئیسی ای او تعلیم کو نجی سکولز،مالکان  کیخلاف سخت کریک ڈاؤن کا حکم دیدیاڈپٹی کمشنر کی زیر صدارت کورونا کی صورتحال اور گندم کی خریداری مہم بارے جائزہ اجلاس منعقد ہواایڈیشنل ڈپٹی کمشنرز، اسسٹنٹ کمشنرز،صحت،تعلیم،فوڈ،سول ڈیفینس،لوکل گورنمنٹس کے افسران نے اجلاس میں شرکت کی ڈپٹی کمشنر نے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ایس او پیز فالو نہ کرنے والی مساجد کی انتظامیہ کیخلاف مقدمات درج کرائے جائیں ویکسینیشن سنٹرز پر رش کنٹرول کرنے کیلئے اقدامات کئے جائیں لاک ڈاؤن پر عمل نہ کرنے والوں کیساتھ زیرو ٹالرینس پالیسی پر عمل کیا جائے انہوں نے ہدایت کی کہ محکمہ خوراک گندم خریداری کا ہدف یقینی بنائے دریں اثناء ڈپٹی کمشنر نے گزشتہ روز رات گئے خانیوال شہر میں مختلف میڈیکل سٹورز کا اچانک معائنہ کیا اور ایس اور پیز کی خلاف ورزی پر کئیر فارمیسی کے مالک کو موقع پر گرفتار کرادیاڈپٹی کمشنر نے سٹورز پر کورونا سے متعلقہ ادویات کی دستیابی اور ان کے نرخوں کی پڑتال بھی کی۔ عید شاپنگ کا رش،شہریوں اور دکانداروں نے کورونا ایس او پیز کو ہوا میں اڑا دیا۔ کورونا کے مریضوں میں مزید اضافے کا خدشہ۔ 15 رمضان آتے ہی بازاروں اور مارکیٹوں میں شہریوں نے عید خریداری کے لئے بازاروں کا رخ کرلیا ہے، کورونا کی تیسری لہر انتہائی خطرناک فیز میں داخل ہونے کے باوجود خانیوال کے تجارتی مرکز گھنٹہ گھر کے ملحقہ بازاراور دیگر ملحقہ بازاروں میں گذشتہ روز لاکھوں شہریوں نے عید کی شاپنگ کی، عید شاپنگ میں مگن شہریوں نے کورونا ایس او پیز کو بھی نظر انداز کردیا، مارکیٹوں میں دن بھر اور خاص کر افطار سے قبل تل دھرنے کی جگہ باقی نہ رہی، جبکہ انتہائی رش کی وجہ سے سماجی فاصلے برقرار رکھنا ناممکن ہوگیا اس کے علاوہ بڑی تعداد میں شہریوں نے فیس ماسک بھی نہیں پہن رکھا تھا اور ایک ایک موٹرسائیکل پر 3سے 4 لوگ سوار تھے، جبکہ دکانداروں نے بھی سماجی فاصلے، فیس ماسک اور ہینڈ سینی ٹائزر کی پابندی پر عمل نہیں کیا جس کی وجہ سے کورونا وبا کے پھیلاو میں مزید اضافے کا شدید خطرہ ہے۔ کورونا وائرس کی تیسری لہر کے پیش نظر ٹریفک ہیڈ کوارٹرز سمیت ضلع بھر کی 18ٹریفک چوکیوں میں روزانہ کی بنیاد پر اینٹی کورونا وائر س سپرے کروانے کا حکم دے دیا، تفصیلات کے مطابق حکومت پنجاب نے صوبہ بھر کے مختلف اضلاع میں ٹریفک ہیڈ کوارٹرز سمیت ضلع بھر کی 18ٹریفک چوکیوں پر روزانہ کی بنیاد پر اینٹی کورونا وائر س سپرے کروانے کا حکم دیا ہے اور تمام ٹریفک سٹاف کو اس بات کا پابند بنایا جائے کہ دوران ڈیوٹی ماسک کا استعمال کریں اور اس وبا سے خودکو اور اپنے اہل خانہ کو محفوظ رکھنے کے لیے تمام حفاظتی انتظامات کو یقینی بنائیں۔   ضلعی انتظامیہ خانیوال نے کورونا ایس او پیز، لاک ڈاؤن احکامات کی خلاف ورزی کرنے والوں کیخلاف کارروائیوں بارے ایک سالہ رپورٹ جاری کردی ڈپٹی کمشنر آغا ظہیر عباس شیرازی کی زیر سرپرستی ضلع خانیوال کی صوبہ بھر میں نمایاں کارکردگی رہی-ترجمان ضلعی انتظامیہ کیمطابق 18 مارچ 2020 تا 29 اپریل 2021 کے دوران 245 ایف آئی آرز درج کراکے 389 دکانداروں اور شہریوں کو جیل بھجوایا گیا309 دکانیں،24 میرج ہالز اور ریسٹورنٹس کو سیل کیا گیاجبکہ احکامات کی خلاف ورزی کرنے والوں کو 87 لاکھ روپے سے زائد کے جرمانے بھی کئے گئے-ترجمان کے مطابق افسران نے 26989 مارکیٹس انسپکشنز کئے 8808 افراد احکامات کی خلاف ورزی کے مرتکب پائے گئے۔  ٹبہ سلطانپور میں متعدددکانداروں کی ہٹ دھرمی ایس او پیز پر عمل درآمد کیے بغیر دکانیں کھول لیں پولیس نے پہنچ کردکانیں بندکروائی تفصیل کے مطابق چوک عاصمم ٹبہ سلطان پور میں دکانداروں کی ہٹ دھرمی حکومت کی جمعہ کے روز لاک ڈاؤن اورایس اوپیز کے احکامات ہوا میں اڑا تے ہوئے دکانیں کھول رکھی تھی اور شہریوں کی اطلاع پر تھانہ ٹبہ سلطان پور کی پولیس نے موقع پرپہنچ کردکانیں بند کروائیں اور متعدد دکانداروں کو حوالات میں بند کر دیا پولیس نے گزشتہ روز شہر کے مختلف مقامات پر چیکنگ کے دوران بغیر ماسک لگائے گھومنے پھرنے ڈرائیونگ کرنے اور شام چھ بجے کے بعد دکانیں کھولنے کے الزام میں 16شہریوں کے خلاف کرونا ایس او پیز کی خلاف ورزی کے الزام میں مقدمات درج کر لیے ملزمان میں ٹرک ڈرائیور رفیق سکنہ لورالائی،محمد عثمان،محمد یوسف،بہزاد احمد،توقیر حسین،شفیق احمد،عرفان انصاری،فیاض ملک،عبدالروف،سجاد انصاری،طارق،مرزا ندیم،خالق نواز،مزمل سیال،عمر رشید،وسیم رسول شامل ہیں۔ کرونا وائرس ایس او پیز کے تحت پنجاب حکومت ڈپٹی کمشنر خانیوال اسسٹنٹ کمشنر جہانیاں کی ہدایت پر ہفتہ وار 2 روزہ لاک ڈان کے پہلے روز جمعہ کو لاک ڈان کی خلاف ورزی کرتے ہوئے دوکانیں کھلی رکھنے پر ایس ایچ او پولیس تھانہ ٹھٹھہ صادق آباد انسپکٹر مہر شوکت سنپال نے ٹھٹھہ صادق آباد،پل 14، چک 138 دس آر میں کریک ڈان کیا، اس دوران پولیس کی جانب سے 15 سے زائد افراد دوکانداروں کو گرفتار کرتے ہوئے حوالات میں بند کردیا گیا، پولیس تھانہ ٹھٹھہ صادق آباد کی طرف سے لاک ڈان کے کی خلاف ورزی کرنے والے دوکانداروں کے خلاف پنجاب انفیکشنز عزیز آرڈیننس2020 کے تحت الگ الگ 4 مقدمات درج کر لیے گئے ہیں، ضلعی انتظامیہ خانیوال نے کورونا ایس او پیز، لاک ڈاؤن احکامات کی خلاف ورزی کرنے والوں کیخلاف کارروائیوں بارے ایک سالہ رپورٹ جاری کردی-ڈپٹی کمشنر آغا ظہیر عباس شیرازی کی زیر سرپرستی ضلع خانیوال کی صوبہ بھر میں نمایاں کارکردگی رہی-ترجمان ضلعی انتظامیہ کیمطابق 18 مارچ 2020 تا 29 اپریل 2021 کے دوران 245 ایف آئی آرز درج کراکے 389 دکانداروں اور شہریوں کو جیل بھجوایا گیا-309 دکانیں،24 میرج ہالز اور ریسٹورنٹس کو سیل کیا گیاجبکہ احکامات کی خلاف ورزی کرنے والوں کو 87 لاکھ روپے سے زائد کے جرمانے بھی کئے گئے-ترجمان کے مطابق افسران نے 26989 مارکیٹس انسپکشنز کئے 8808 افراد احکامات کی خلاف ورزی کے مرتکب پائے گئے -  حکومت پنجاب نے ضلع بھر میں اب تک مجموعی طور پر39ہزار 927 بزرگ افراد کو کورونا سے بچاؤ کی ویکسین لگائی جاچکی ہے جن میں 30ہزار 689کو پہلی اور9238 کو دوسری خوراک لگائی گئی اس ضمن میں 6 ویکسینیشن سنٹر دوشفٹوں میں فنکشنل لگائی جاچکی ہے۔

کروناوائرس

مزید :

صفحہ اول -