شفقت محمود کے خلاف ’ واحیات ‘ ٹویٹس کرنے والے طالبعلموں کی اس حرکت پر اداکارہ عائشہ عمر سخت ناراض ہو گئیں ، پیغام جاری کر دیا 

شفقت محمود کے خلاف ’ واحیات ‘ ٹویٹس کرنے والے طالبعلموں کی اس حرکت پر ...
شفقت محمود کے خلاف ’ واحیات ‘ ٹویٹس کرنے والے طالبعلموں کی اس حرکت پر اداکارہ عائشہ عمر سخت ناراض ہو گئیں ، پیغام جاری کر دیا 

  

لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن )کورونا وائرس کے تیزی سے پھیلاﺅ اور کیمبرج امتحانات کے معاملے پر وزیر تعلیم شفقت محمود کے خلاف ٹویٹر پر ٹویٹس کا طوفان برپا ہوا جس میں اکثر کا مطالبہ تھا کہ امتحانات کو منسوخ کیا جائے جس میں متعدد سیاستدانوں اور سلیبریٹیز نے بھی میدان میں آتے ہوئے ہاں میں ہاں ملائی تاہم کچھ طلبہ کی جانب سے لائن کو کراس کیا گیا اور شفقت محمود کے خلاف واحیات ٹویٹس کیئے گئے جس پر بعدازاں انہوں نے رد عمل دیتے ہوئے بچوں کی جانب سے استعمال کی جانے والی زبان پر مایوسی کا اظہار بھی کیا تھا ۔

اس معاملے پر شفقت محمود اکیلے نہیں ہیں بلکہ اب پاکستان کی معروف اداکارہ عائشہ عمر بھی اس معاملے پر بات کرنے کیلئے سامنے آئی ہیں ، انہوں نے طلبہ کے شرمناک رویے پر افسوس کا اظہار کیاہے ۔ اپنی انسٹاگرام سٹوری پر اداکارہ کا کہناتھا کہ ” یہ بہت ہی شرمناک ہے کیا ہم اس طرح کی قوم پروان چڑھا رہے ہیں ، بڑو ںکیلئے اس قدر بے ادبی ، تنقید اور مختلف نظریات کو بے ادبی تک نہیں جانا چاہیے ، اگر آپ کسی کے ساتھ اتفاق نہیں کرتے تو اس کا مطلب یہ نہیں ہے کہ آپ توہین آمیز رویہ اختیا رکر لیں ، ہمیں اس پرنظر ثانی کرنے کی ضرورت ہے “۔اداکارہ کا کہناتھا کہ والدین اپنے بچوں کے انٹرنیٹ پر استعمال کی نگرانی کریں ، زیادہ سختی کی ضرورت نہیں بلکہ انہیں پیار اور طریقے سے سمجھائیں تاکہ اچھی مثال قائم کی جا سکے ۔ 

عائشہ عمر نے بعدازاں اس معاملے پر ٹویٹر پر بھی اپنے خیالات کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ ” پیارے سٹوڈنٹس ، تنقید اور نقطہ نظر مختلف ہونے کا یہ مطلب نہیں ہے کہ توہین آمیز رویہ اختیار کیا جائے ، ہم ادب کے دائرے میں رہتے ہوئے بھی دوسری طرف اپنا موقف پیش کر سکتے ہیں ، چلیں پریشان کن حالات میں اپنے جذبات اور غصے پر قابو پانے کی کوشش شروع کر تے ہیں ۔

اس ہفتے کے شروع میں شفقت محمود نے اعلان کرتے ہوئے کہا تھا کہ 15 جون سے قبل کوئی بھی امتحان نہیں ہوگا ، یہ فیصلہ اس وقت سامنے آیا جب بھاری تعداد میں سٹوڈنٹس کی جانب سے امتحانات منسوخ کرنے کا مطالبہ کیا جارہاتھا اور ایگزیمینشن سینیٹرز میں ایس او پیز کی بھاری خلاف ورزی بھی دیکھنے کو ملی ۔

مزید :

قومی -تفریح -