بھارت، 25 سالہ حاملہ ڈاکٹر ماہا بشیر کورونا سے چل بسیں

بھارت، 25 سالہ حاملہ ڈاکٹر ماہا بشیر کورونا سے چل بسیں
بھارت، 25 سالہ حاملہ ڈاکٹر ماہا بشیر کورونا سے چل بسیں

  

نئی دہلی (ویب ڈیسک) بھارتی ریاست کیرالہ سے تعلق رکھنے والی 25 سالہ ڈاکٹر ماہا بشیر کورونا کا شکار ہونے کے بعد موت کے منہ میں چلی گئیں۔

روزنامہ جنگ کے مطابق  ڈاکٹر بشیر گزشتہ برس ڈاکٹر کے ساتھ ہی رشتۂ ازدواج میں منسلک ہوئی تھی اور بتایا جارہا ہے کہ وہ 6 ماہ کی حاملہ تھیں۔ بھارت میں کورونا کی شدت کے بعد اپریل کے وسط میں ڈاکٹر ماہا کا کورونا ٹیسٹ مثبت آیا اور وہ فرنٹ لائن پر کام کرنے کے دوران حالت بگڑنے پر ہسپتال میں داخل کیا گیا۔

غیر ملکی میڈیا رپورٹس کے مطابق ڈاکٹر ماہا نے بھارت سے تعلیم حاصل کرنے کے بعد اعلیٰ تعلیم کیلئے دبئی چلی گئی تھی اور اب اپنے ملک میں پیشہ وارانہ فرائض سرانجام دے رہی تھیں۔

بتایا جارہا ہے کہ کورونا کا کار ہونے پر ڈاکٹر ماہا کی حالت بہتر تھی لیکن اچانک ہی ان کی حالت بگڑی اور بچے کی موت واقع ہوگئی جس کے کچھ روز بعد ڈاکٹر ماہا بھی خالقِ حقیقی سے جا ملیں۔

مزید :

بین الاقوامی -کورونا وائرس -