مودی کی کشمیر آمد پر7نومبر کو ملین مارچ کامیاب بنایا جائے‘ یاسین ملک

مودی کی کشمیر آمد پر7نومبر کو ملین مارچ کامیاب بنایا جائے‘ یاسین ملک

سری نگر(کے پی آئی) جموں وکشمیر لبریشن فرنٹ چیئرمین محمد یاسین ملک نے وزیراعظم نریندر مودی کی کشمیر آمد پر7نومبر کو ملین مارچ کامیاب بنانے اور اجاز ت نہ دینے کی صور ت میں سیول کرفیو اور مکمل ہڑتال کی اپیل کی ہے۔ایک بیان میں لبریشن فرنٹ سربراہ یاسین ملک نے کہابھارت اور مقامی بھارت نواز سیاستدانوں نے ہمیشہ یہاں ہونے والے جلسے جلوسوں کو بھارت کے تسلط کو جواز بخشنے کیلئے استعمال کیا ہے۔ ماضی کی تاریخ بھی اس بات کی شاہد ہے کہ جموں کشمیر میں ہندنوازسیاست دان اور انکی جماعتیں لوگوں کو دھوکہ دینے کیلئے نوکریوں، سڑکوں، بجلی،پانی،ریلیف،پیکج یہاں تک کہ آزادی،نیم خود مختاری اور سیلف رول جیسے میٹھے زہر دے کر انہیں حکومتی جلسے جلوسوں میں شریک کرتے ہیںیا پھر ووٹ ڈالنے پر راغب کرتے ہیں

لیکن جیسے ہی ان کا کام نکلتا ہے وہ ان جلسے جلوسوں اور لوگوں کی ان میں موجودگی کو بھارت کے حق میں لوگوں کا فیصلہ قرار دے کر دنیا کو بے وقوف کرنے میں جٹ جاتے ہیں۔ملک نے کہا کہ مودی کے مجوزہ جلسے کیلئے بھی پی ڈی پی اور حکمران اتحاد میں شامل دوسری جماعتیں سرگرم ہوچکی ہیں اور سرکاری مشینری، ملازمین اور دوسرے ذرائع کا استعمال کرکے یہاں آر ایس ایس ایجنڈے کے نفاذ اوربھارتی تسلط کو جواز بخشنے کیلئے ایک اسٹیج ڈ ڈرامہ رچا جارہا ہے تاکہ دنیا کو دھوکہ دیا جاسکے۔ان کا کہناتھا کہ حکمرانوں کی ان چالوں سے یہاں کے ذی ہوش واقف ہیں اور انہی سازشوں کو مناسب جواب دینے کیلئے لبریشن فرنٹ نے بھی کئی پرامن جواب سوچ رکھے تھے۔ملک کے مطابق اسی کے تحت جے کے ایل ایف کا پروگرام تھا کہ باہمی مشاورت کے بعد لال چوک چلو کی کال دی جائے اور تاریخی لالچوک میں جمع ہوکر دنیا تک کشمیریوں کا پرامن اور واضح پیغام پہنچایا جائے ۔

مزید : عالمی منظر