الیکشن والے اضلاع میں اعلان کے باوجود بجلی کی لوڈ شیڈنگ کی گئی

الیکشن والے اضلاع میں اعلان کے باوجود بجلی کی لوڈ شیڈنگ کی گئی

لاہور(کامرس رپورٹر) وزارت بجلی و پانی کی صوبائی دارالحکومت سمیت بلدیاتی الیکشن والے بیس اضلاع میں بجلی کی بلا تعطل فراہمی کا اعلان صرف اعلان ہی ثابت ہوا ۔ الیکشن والے شہروں میں بجلی کی مسلسل فراہمی کی کوشش دیگر شہروں کے لئے عذاب کا باعث بن گئی ۔ الیکشن والے اضلاع میں بھی بجلی کی پیداوار میں کمی کے باعث سارا دن لوڈ شیڈنگ کا سلسلہ بند نہیں رکھا جا سکا تاہم شام کے وقت سے لیکر رات گیارہ بجے تک لوڈ شیڈنگ کا سلسلہ بند رکھا گیا ۔دیگر بڑے شہروں میں پندرہ گھنٹے جبکہ دیہی علاقوں میں اٹھارہ گھنٹے تک کی لوڈ شیڈنگ کی گئی ۔ الیکشن والے اضلاع میں رات گیارہ بجے کے بعد لوڈ شیڈنگ کا سلسلہ شروع کر دیا گیا ۔ وزارت بجلی و پانی نے گزشتہ روز بجلی کی پیداوار بڑھانے کے لئے ارسا سے ڈیموں سے پانی کے زائد ا،خراج کی ہدایت کی تھی لیکن ارسا کی جانب سے انکار کر دیا گیا تھا اس طرح ہی سوئی ناردرن نے بھی بجلی گھروں کو گیس کی سپلائی بڑھانے سے انکار کر دیا تھا جس کے باعث دیگر شہروں میں زائد لوڈ شیڈنگ کرکے الیکشن والے اضلاع میں کم لوڈ شیڈنگ کی گئی ۔ انرجی مینجمنٹ سیل کے ذرائع کے مطابق گزشتہ روز بجلی کی مجموعی ڈیمانڈ 15930 میگا واٹ جبکہ پیداوار 11120 میگا واٹ رہی طلب و رسد میں 4810 میگا واٹ کا فرق رہا ۔

مزید : علاقائی