سعودی شہری داعش سے بھی بڑا خطرہ کسے سمجھتے ہیں؟ سروے میں انتہائی حیران کن انکشاف

سعودی شہری داعش سے بھی بڑا خطرہ کسے سمجھتے ہیں؟ سروے میں انتہائی حیران کن ...
سعودی شہری داعش سے بھی بڑا خطرہ کسے سمجھتے ہیں؟ سروے میں انتہائی حیران کن انکشاف

  

ریاض(مانیٹرنگ ڈیسک) شام میں برسرپیکار شدت پسند تنظیم داعش اس وقت دنیا کے لیے سب سے بڑا بن کر سامنے آ چکی ہے مگر سعودی عرب کے شہریوں نے داعش کی بجائے ایران کو اپنے لیے سب سے بڑا خطرہ قرار دے دیا ہے۔ واشنگٹن کے تحقیقاتی ادارے نے سعودی عرب میں اس سروے کا اہتمام کیا اور سعودی شہریوں کے سامنے مختلف نام رکھے اور ان سے پوچھا کہ آپ ان میں سے کس کو اپنے ملک کے لیے زیادہ بڑا خطرہ سمجھتے ہیں۔ جواب میں حیران کن طور پر 78فیصد سعودی شہریوں نے ایران کو سعودی عرب کے لیے خطرہ قرار دے دیا۔

دوسری طرف داعش کو صرف14فیصد سعودی شہریوں نے اپنے ملک کے لیے خطرہ قرار دیا۔ سروے میں شامل صرف 12فیصد لوگوں نے سعودی عرب اور ایران کی پالیسیوں میں بہترین آنے کی امید ظاہر کی۔ سروے میں 42فیصد سعودی شہریوں نے ایران کی یورپی ممالک کے ساتھ ہونے والے نیوکلیئر معاہدے کو برا قرار دیا جبکہ 39فیصد نے اسے بہتر معاہدہ قرار دیا۔سروے کے نتائج میں واضح طور پر دیکھا جا سکتا ہے کہ سعودی شہری ایران، روس اور امریکہ کو علاقے کے استحکام میں رکاوٹ سمجھتے ہیں۔

مزید : بین الاقوامی