بحیرہ عرب میں ماہا کی تشکیل، خطے میں 3 طوفان موجود

        بحیرہ عرب میں ماہا کی تشکیل، خطے میں 3 طوفان موجود

  



کراچی( اسٹاف رپورٹر)بحیرہ عرب میں شدید سمندری طوفان کیار کے خاتمے سے قبل ہی ایک اور طوفان تشکیل پاگیا ہے جسے سائیکلون ماہا کا نام دے دیا گیا ہے، جبکہ قریب ہی ساوتھ چائنہ سی میں بھی ایک اور طوفان بن گیا ہے۔پاکستانی محکمہ موسمیات کے مطابق جنوب مشرقی بحیرہ عرب میں ہوا کا شدید کم دباو ایک اور سمندری طوفان میں تبدیل ہوگیا ہے جسے سمندری طوفان ماہا کا نام دیا گیا ہے جس کے بعد اس وقت بحیرہ عرب میں موجود طوفانوں کی تعداد 2 ہو گئی ہے۔پاکستان میٹرولوجیکل ڈپارٹمنٹ سندھ کے چیف میٹرولوجیکل آفیسر سردار سرفراز کا کہنا ہے کہ اس وقت وقت نہ صرف بحیرہ عرب میں 2 طوفان موجود ہیں بلکہ ساوتھ چائنہ سی میں بھی اور ایک طوفان تشکیل پا چکا ہے۔ماہرینِ موسمیات کا کہنا ہے کہ ایک ہی وقت میں ایک علاقے میں 3 طوفانوں کی تشکیل اس بات کا ثبوت ہے کہ موسمیاتی تبدیلیوں کے زیرِ اثر نئے حوادث جنم لے رہے ہیں اور آنے والے چند سالوں میں موسمیاتی حوادث کے نتیجے میں ہونے والی تباہی میں کافی حد تک اضافہ ہو جائے گا۔ماہرین کا کہنا ہے کہ سمندروں کا درجہ حرارت بڑھنے کی وجہ سے طوفانوں کی تشکیل بھی بڑھ گئی ہے جس کا ثبوت بحیرہ عرب میں بیک وقت 2 طوفانوں کی تشکیل جبکہ پڑوسی ساوتھ چائنہ سی میں بھی ایک طوفان کی تشکیل ہے۔پاکستانی محکمہ موسمیات کا کہنا ہے کہ نو تشکیل شدہ طوفان ماہا جسے یہ نام عمان کے محکمہ موسمیات کی تجویز پر دیا گیا ہے، بحیرہ عرب میں پہلے سے موجود طوفان کیار کے نقشِ قدم پر چلے گا اور اس کا رخ بھی عمان اور یمن کے ساحلوں کی طرف ہی ہوگا۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر