بدقسمت ٹرین میں میرپور خاص کے 200مسافر سوار تھے

بدقسمت ٹرین میں میرپور خاص کے 200مسافر سوار تھے

  



میرپورخاص(خصوصی رپورٹ) رحیم یار خان کے نذدیک لیاقت پور تیزگام ٹرین حادثے میں جلنے والی بوگیوں میں میرپورخاص اور ارد گرد کے علاقوں سے 200سے زائد افراد بھی رائے ونڈ تبلیغی اجتماع میں جا رہے تھے تبلیغی مرکز اور ضلعی انتظامیہ سے ملنے والی معلومات کے مطابق متاثر ہونے والی بوگی نمبر 12 میں میرپورخاص کے 77 کنری کے 10 مسافر سوار تھے جن کی تفصیلات یہ ہیں، مکرانی مسجد غریب آباد میرپورخاص سے 10 افراد، سلطان مسجد پیر کالونی سے 9 افراد، بسمہ اللہ مسجد سٹلائٹ ٹاﺅن سے 48 افراد بسمہ اللہ مسجد، حمید پورہ کالونی سے 6 افراد،قبیٰ مسجد سٹلائٹ ٹاﺅن سے 10 افراد، بلال مسجد پاک کالونی سے 10 افراد رائیونڈ اجتماع کے لئے جارہے تھے جو بوگی نمبر 12 میں سوار تھے اور اب تک میرپورخاص کے قاری مقبول احمد ، مولوی ہارون، نوید، شریف آرائیں ، محبوب احمد، ،بلال احمد، محمد معاز ، محمد سلیم، معاویہ، وقار علی مری، حسن مری ، ندیم، مولوی محمد عمر، یاسرآرائیں ، آفتاب احمد ،محمد نواز ، عبدالطیف سمیت 16 افراد کے شہید ہونے کی تصدیق ہو سکی ہے جبکہ 20سے زائد افراد کے زخمی ہونے کی اطلاعات ہیں جبکہ میرپورخاص سے تعلق رکھنے والے افراد کی ایک بڑی تعداد لاپتہ ہے ضلع انتظامیہ میرپورخاص کی جانب سے رائیونڈ اجتماع میں جانے والے تپیدار عطا پٹھان جو کہ تیزگام سے پچھلی ٹرین میں سوار تھے اور وہ اس حادثے میں محفوظ رہے ہیں انکو کوارڈنیٹر تعینات کیا گیا ہے جو کہ رحیم یار خان اور دیگر شہروں کے اسپتالوں میں جاکر شہید اور زخمی ہونے والے افراد کی معلومات اکٹھی کر رہے ہیں جبکہ ضلع انتظامیہ میرپورخاص ضلعی پولیس کی جانب سے بھی ڈی سی آفس اور اسٹیشن چوک پر ایک معلوماتی کیمپ قائم کردیا گیا ہے جہاں سے شہری اجتماع میں جانے والے افراد اور اس حادثے میں شہید اور زخمی ہونے والے افراد کی معلومات حاصل کر رہے ہیںتیزگام سانحے میں جاں بحق ہونے والے میرپورخاص کے افراد کے سوگ میں بلدیہ مارکیٹ مکمل طور پر بند کردی گئی تیزگام سانحہ میں میرپورخاص کے درجنوں افراد کی اب تک شہادت ہونے کی اطلاعات موصول ہوچکی ہیں اور یہ تمام افراد میرپورخاص سے رائیونڈ اجتماع میں شرکت کے لئے بذریعہ ٹرین جا رہے تھے کہ یہ سانحہ رونما ہوگیا واقع کے بعد بلدیہ مارکیٹ میرپورخاص کے دکانداروں نے سوگ میں مارکیٹ مکمل طور پر بند کردی ہے انکا کہنا ہے کہ واقع میں جاں بحق ہونے والے افراد بلدیہ مارکیٹ سے تعلق رکھتے تھے اور ہم دکھ کی اس گھڑی میں برابر کے شریک ہیں۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر