سمندری طوفان ”کیا ر“ کے ٹلنے کے بعد ”ماہا“ کی وارننگ جاری 

    سمندری طوفان ”کیا ر“ کے ٹلنے کے بعد ”ماہا“ کی وارننگ جاری 

  



کراچی(مانیٹرنگ ڈیسک،آئی این پی)بحیرہ عرب میں موجود سپر سائیکلون ’کیار‘ مزید کمزور پڑگیا ہے لیکن محکمہ موسمیات نے بحیرہ عرب میں ایک اور طوفان ماہا کے حوالے سے خطرے کی گھنٹی بجادی ہے۔محکمہ موسمیات کے مطابق سمندری طوفان کیار مزید کمزور پڑگیا ہے اور کراچی سے اب طوفان کا فاصلہ 120 کلو میٹر مزید بڑھنے کے بعد  910 کلو میٹر ہوگیا ہے، کراچی سے طوفان کا فاصلہ 790 کلومیٹر تھا۔ اگلے 12 گھنٹوں میں کیار طوفان مزید ایک درجہ کم ہوکر کیٹگری 2 میں جاسکتا ہے اور اگلے 24 گھنٹوں میں گلف آف عدن میں داخل ہوگا۔دوسری جانب محکمہ موسمیات نے نئے سمندری طوفان ماہا کے حوالے سے پہلی ایڈوائزری جاری کردی ہے، جس میں بتایا گیا ہے کہ بحیرہ عرب میں ایک اور سمندری طوفان ماہا بن گیا ہے۔ ہوا کا کم دباؤ انتہائی تیزی سے تبدیل ہونے والا نیا طوفان ماہا اگلے 24 گھنٹوں میں شدت اختیار کرے گا۔دوسری طرفجمان پاک بحریہ نے کہا ہے کہ پاک بحریہ کے عملے نے کیٹی بندر اور شاہ بندر کے نواحی علاقوں میں ریسکیو آپریشن کیا اور سمندری طوفان سے متاثرہ علاقے میں لوگوں کی مدد کی۔تفصیلات کے مطابق ترجمان پاک بحریہ نے کہا ہے کہ سپرسائیکلون کیار کے باعث تین سو مکانات متاثر ہوئے، جس کے باعث پاک بحریہ کے عملے نے کیٹی بندر اور شاہ بندر کے نواحی علاقوں میں ریسکیو آپریشن کیا۔ترجمان کا کہنا تھا کہ ریسکیو آپریشن کے دوران متاثرہ خاندانوں کو محفوظ مقام پر منتقل کیا گیا، متاثرہ عوام کو بنیادی طبی امداد اور دیگر اشیائے ضروری فراہم کی گئیں۔پاک بحریہ نے سمندری کٹاو روکنے کے لیے بند کی دوبارہ تعمیر میں مدد بھی کی، جبکہ سینکڑوں افراد کا محفوظ مقامات پر منتقل کردیا گیا ہے۔

ماہا

مزید : صفحہ آخر