لیڈی ہیلتھ ورکرز مستقلی کی تفصیلی رپورٹ جمع کرائی جائے، سپریم کورٹ

لیڈی ہیلتھ ورکرز مستقلی کی تفصیلی رپورٹ جمع کرائی جائے، سپریم کورٹ

  



 اسلام آباد (این این آئی)سپریم کورٹ نے لیڈی ہیلتھ ورکرز کی مستقلی سے متعلق کیس میں وفاق،چاروں صوبوں اور آزاد کشمیر کے لا افسران سے 2 ہفتوں میں رپورٹ طلب کر تے ہوئے کہا ہے کہ لیڈی ہیلتھ ورکرز کی مستقلی،سروس سٹرکچر اور تنخواہوں سے متعلق تفصیلی رپورٹ جمع کرائی جائے۔ گزشتہ روز جسٹس گلزار احمد کی سربراہی میں دو رکنی بینچ نے سماعت کی۔ دور ان سماعت عدالت نے  ڈیوٹی ٹائم کے بعد لیڈی ہیلتھ ورکرز کو بلانے کے الزام پر کوآرڈینیٹر سندھ ڈاکٹر ذوالفقار دھاریجو کو آئندہ سماعت پر طلب کرتے ہوئے کہاکہ ڈاکٹر ذوالفقار دھاریجو ایک ہفتے میں الزامات سے متعلق بیان حلفی جمع کرائیں۔ قبل ازیں درخواست گزار بشریٰ نے کہاکہ کئی ماہ گزرنے کے باوجود عدالتی احکامات پر عمل نہیں ہورہا،لیڈی ہیلتھ ورکرز کو سروس کے مطابق مراعات نہیں مل رہیں،سندھ میں لیڈی ہیلتھ ورکرز کو رات کو بھی ڈیوٹی پر بلا لیا جاتا ہے۔ جسٹس گلزار احمد نے کہاکہ لیڈی ہیلتھ ورکرز کا رات کو کیا کام ہے۔ ڈاکٹر ذو الفقار نے کہاکہ ایسی کوئی بات نہیں آپ انکوائری کروا لیں۔ جسٹس گلزار احمد نے کہاکہ آپکو معطل کر کے ایف آئی آر درج کرتے ہیں پھر انکوائری کریں گے۔ بعد ازاں کیس کی سماعت 2 ہفتوں کیلئے ملتوی کر دی گئی۔

سپر یم کورٹ

مزید : صفحہ آخر