نواز شریف کیلئے پنجاب کارڈیالوجی میں آپریشن تھٹیر تیار، عملے کو الرٹ رہنے کا حکم 

    نواز شریف کیلئے پنجاب کارڈیالوجی میں آپریشن تھٹیر تیار، عملے کو الرٹ ...

  



لاہور(جنرل رپورٹر،این این آئی)نوازشریف کے علاج کیلئے قائم میڈیکل بورڈ کے سربراہ ڈاکٹر محمود ایازنے کہا ہے کہ سابق وزیراعظم کیلئے آپریشن تھیٹر تیار کیا گیا ہے۔میڈیکل بورڈ کے سربراہ ڈاکٹر محمد ایاز نے بتایا کہ نواز شریف بظاہر ٹھیک ہیں، پلیٹ لیٹس میں اتار چڑھاؤ کے باعث اندرونی طور پر بہت ٹوٹ پھوٹ ہوئی ہے۔انہوں نے کہاکہ پنجاب انسٹی ٹیوٹ آف کارڈیالوجی میں آپریشن تھیٹر تیار کیا گیا ہے جس کے عملے کو 24 گھنٹے الرٹ رہنے کا کہا گیا ہے۔ڈاکٹر محمود نے مزید بتایا کہ پچھلے دنوں نواز شریف کو انجائنا کا اٹیک ہوا تھا، پلیٹ لیٹس بڑھانے کیلئے مزید دوائیں اور انجکشن نہیں دے سکتے، پلیٹ لیٹس بڑھانے کی دوائی دل پر دباؤ ڈالتی ہے اور کوئی بھی دوائی بڑھانے سے گردے پر اثر پڑتا ہے جبکہ ادویات دینے سے یوریا کیریٹن بھی بڑھ جاتا ہے جو گردوں کو متاثر کر رہا ہے۔ذرائع کے مطابق نوازشریف کے پلیٹ لیٹس کی تعداد 39 ہزار تک پہنچ گئی ہے اور اب انہیں سٹیرائیڈز دئیے جارہے ہیں۔ذرائع کے مطابق میڈیکل بورڈ کا کہنا ہے کہ خون بہنے کے خطرات اب کم ہیں، پلیٹ لیٹس مزید بڑھانے کیلئے ادویات دینے سے زندگی کو خطرہ ہوگا۔ذرائع نے بتایا کہ نوازشریف کو انسولین دینے کے باوجود ان کی شوگر کنٹرول میں نہیں اور اس میں اتار چڑھاؤ جاری ہے۔علاوہ ازیں وزیراعظم آزاد کشمیر راجہ فاروق حیدر کو سابق وزیراعظم نواز شریف کی عیادت کی اجازت نہ مل سکی۔تفصیلات کے مطابق وزیراعظم آزاد کشمیر راجہ فاروق حیدر پارٹی قائد نواز شریف کی عیادت کیلئے سروسز ہسپتال پہنچے تو ہسپتال حکام کی جانب سے وزیراعظم آزاد کشمیر راجہ فاروق حیدر کو بتایاگیا کہ نواز شریف کا چیک اپ جاری ہے اور ٹیسٹ لئے جا رہے ہیں، اس وقت ملاقات ممکن نہیں ہے جس پر راجہ فاروق حیدر اپنے قائدنواز شریف کی عیادت نہ کرسکے۔ہسپتال کے باہر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے پابندی کی وجہ سے نواز شریف سے ملاقات نہیں کرنے دی گئی،پاکستان اور آزاد کشمیر دونوں اطراف کے عوام نواز شریف کی صحتیابی کی دعا کر رہے ہیں۔انہوں نے کہا کہ نواز شریف کی ہمارے ساتھ وابستگی کو کبھی نہیں بھلایا جا سکتا ہم جمعہ کو نواز شریف کی صحتیابی کیلئے یوم دعا منائیں گے۔وزیراعظم آزاد کشمیر نے کہا کہ نواز شریف اس ملک میں مزاحمت کی علامت ہیں اورہمیں ان کے ساتھ دلی ہمدردی ہے جبکہ ہم امید کرتے ہیں کہ ریاست ان کو بنیادی سہولیات دے گی۔انہوں نے کہا کہ ہندوستان جو کر رہا ہے اس کا نشانہ پاکستان ہے،حکومت وقت کی ذمہ داری ہے کہ قوم کو یکجا کرے،قومی یکجہتی سے ہی مسئلہ کشمیر کا حل ممکن ہے۔ وزیراعظم آزادکشمیر نے آزادی مارچ کے حوالے سے بات کرتے ہوئے کہاکہ آزادی مارچ کا کیا نتیجہ نکلتا ہے اس کا جلد پتہ چل جائے گا۔

نوازشریف/فاروق حیدر

مزید : صفحہ اول