بھارتی سکھ یاتریوں کی سونے کی پالکی کے ہمراہ پاکستان آمد

      بھارتی سکھ یاتریوں کی سونے کی پالکی کے ہمراہ پاکستان آمد

  



لاہور(نمائندہ خصوصی)بھارت سے گردوراہ در بارصاحب کر تار پور کیلئے ملکی تاریخ میں پہلی بار سونے کی پالکی کے ہمراہ سکھ یاتریوں کی شرومنی اکالی دل دہلی کے پر دھان پرم جیت سنگھ سر ناکی قیادت میں پاکستان آمدپرگور نر پنجاب چوہدری محمدسرورنے واہگہ بارڈ ر پرسینکڑوں یاتریوں کا شاندار استقبال کیا۔ تفصیلات کے مطابق بھارت کے شہر دہلی سے بھارتی نگرکیرتن سونے کی پالکی لے کر واہگہ کے راستے پاکستان پہنچے، پالکی کر تار پور دربار صاحب میں نصب کی جائیگی۔ گور نر پنجاب چودھری سرور نے واہگہ بارڈر پر چیئر مین متروکہ وقف املاک بورڈ عامر امیر خان اور ایم پی اے مہندر پال سنگھ،پاکستانی رینجرز احکام،پر دھان پاکستان سکھ گردوراہ پر بندھک کمیٹی ستونت سنگھ،جنر ل سیکر ٹری امیر سنگھ پاکستانی سکھ قائدین کے ہمراہ سکھ یاتریوں اور پالکی کا استقبال کیا اور سکھ یاتر یوں کو پھولوں کے ہار پہنائے۔ اس موقعہ پر گور نر پنجاب چودھری محمدسرور نے میڈیا سے گفتگو کے دوران بتایا کہ بھارت کے تمام تر منفی ہتھکنڈوں اور بہانوں کے باوجود 9نومبر کو وزیر اعظم عمران خان کر تار پور راہداری منصوبے کا افتتاح کر یں گے۔ انہوں نے کہا کہ اس میں کوئی شک نہیں کہ کرتار پور کوریڈور حکومت پاکستان اور وزیراعظم عمران خان کا بہترین فیصلہ ہے ہم صرف سکھ یاتریوں کو ہی نہیں تمام مذاہب کے لوگوں کو پاکستان آنے کی دعوت دیتے ہیں۔اُنہوں نے کہا کہ مذہبی سیاحت کے فروغ  کیلئے میری سر براہی میں قائم مذہبی سیاحت اور ورثہ کمیٹی بھر پور اقدامات کر رہی ہے۔

سونے کی پالکی

مزید : صفحہ اول