سپین کی بڑی کمپنی کی پاکستان میں سرمایہ کاری،گورنر پنجاب چوہدری سرور نے لاہور میں پہلی برانچ کا افتتاح کردیا

 سپین کی بڑی کمپنی کی پاکستان میں سرمایہ کاری،گورنر پنجاب چوہدری سرور نے ...
 سپین کی بڑی کمپنی کی پاکستان میں سرمایہ کاری،گورنر پنجاب چوہدری سرور نے لاہور میں پہلی برانچ کا افتتاح کردیا

  



بارسلونا،لاہور(ڈاکٹرقمرفاروق)کندس پاکستان  کا رنگا رنگ تقریب میں گورنر پنجاب چوہدری محمد سرور ،چوہدری کرامت حسین مہر ،چوہدری امانت حسین مہر نے فیتہ کاٹ کر افتتاح کردیا ،خیر وبرکت کی دعا بادشاہی مسجد کے خطیب علامہ ابوالخبیر آزاد نے کرائی،اس موقع پر وزیراعظم عمران خان کے  اوورسیز انوسٹمنٹ کے مشیر صاحبزادہ عامرجہانگیر ،معروف تجزیہ نگار دانشور مجیب الرحمن شامی،معروف سینئر صحافی سہیل وڑایچ،بیورو چیف دنیا نیوز یوکے اظہر جاوید ، کندس ہسپانوی وفد ڈائریکٹر جنرل کندس سپین مانیل رومیرو،وسے مانویل رامون اور دونی اور پاکستان بھر کی نامور سیاسی سماجی بزنس مین صحافی شخصیات نے بھرپور شرکت کی۔

گورنر پنجاب چوہدری محمد سرور ،بدشاہی مسجد کے خطیب مولانا عبدالخبیر آزاد کو افتتاحی تقریب میں شرکت پر خوش آمدید کہا اور پرتپاک استقبال کیا۔اس موقع پر  چوہدری امانت حسین مہر کے والد محترم الحاج چوہدری کرامت حسین مہر کی قیادت میں گڑھا جٹاں سرائے عالمگیر ضلع جہلم بھر سے سینکڑوں افراد کی تعداد میں ایک بڑا قافلہ کندس سٹور کی گرینڈ افتتاح کی پروقار تقریب میں آمد،چوہدری امانت حسین مہر نے آنے والے مہمانوں کا والہانہ استقبال کیا۔

گورنر پنجاب چوہدری محمد سرور نے اپنے خطاب میں کہا کہ ہماری یہ کوشش ہے کہ اوورسیز پاکستانیوں کے مسائل اور پاکستان میں کیسز کے فیصلہ کو ایک سال کے اندر اندر نبٹا دیا جائے ۔انہوں نے کہا کہ چوہدری امانت حسین مہر میرے اور میرے بیٹے کے قریبی دوستوں میں شامل ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ جب میں نے پنجاب میں سیف لائف واٹر کا پلان شروع کیا تھا تو چوہدری امانت حسین سب سے پہلے ہمارے ڈونر تھے۔جنہوں نے اپنے علاقے میں فلٹر پلانٹ لگوائے تھے۔حکومت کی کوشش ہے کہ اگلے چار پانچ سالوں میں پنجاب کے ہر شہر قصبے گاوں میں صاف پینے کے پانی کے پراجیکٹ لگائیں گے۔ہماری کوشش ہو گی کہ ہم بزنس فرینڈلی پالیسی بنائیں ۔اس لئے کہ بزنس مین ملازمت مہیا کرتے ہیں۔اور یہی کمیونٹی ٹیکس ادا کرتی ہے جس سے ملک ترقی پاتے ہیں ۔

کندس پاکستان کے سی ای اور چوہدری امانت حسین نے اپنے خطاب میں کہا کہ آج سے بیس سال پہلے میں اسپین گیا۔اور وہاں پر کاروبار کرنا شروع کیا۔اور آج بیس سال کے بعد انہی اسپانش لوگوں کو اسپین سے پاکستان لے کر آ ئے ہیں۔یہ کمپنی پچھلے ساٹھ ستر سال سے اسپین میں اپنے معیار کا لوہا منوائے ہوئے ہے اور اپنی ایک انٹرنیشنل شناخت رکھتی ہے۔اس کمپنی کی ٹیم کا پاکستان آنا ہمارے لئے فخر کی بات ہے ناصرف میرے لئے بلکہ پورے ملک کے لئے فخر کی بات ہے۔اس چین سے صرف امانت حسین یا اس کی فیملی کو فائدہ نہیں ہوگا اس سے میرے ملک کو فائدہ ہوگا ،میرے لوگوں کو روز گار ملے گا ۔ترسیل زر بڑھے گا،ہمارا کام تھا اس کمپنی کو پاکستان میں لے کر آئیں ۔ہم کندس کو پاکستان نہیں لائے بلکہ کندس والوں کو بھی پاکستان لے کر آئے ہیں۔ ہم چاہتے ہیں کہ ہماری کمپنی پاکستان میں پھلے پھولے ،انہوں نے اپنی کامیابیوں کا سہرا اپنے والد چوہدری کرامت حسین مہر کے سر باندھتے ہوئے کہا کہ ان کی رہنما ئی سے ہی یہ سب ممکن ہوسکا ہے۔

صاحبزادہ عامر جہانگیر نے کہا کہ میں چوہدری امانت حسین مہر کو مبارک باد دیتا ہوں کہ انہوں نے لاہور میں کندس اسٹور کھولا ہے۔شاید آپ لوگ اس کی اہمیت کو نا سمجھتے ہوں اس کی بڑی اہمیت ہے ۔وہ اسلئے کہ یہ اسپین کی ایک بڑی چین ہے ۔جس میں پاکستانی کی محنت کی اپنی تجارت بڑھائی اور آج وہ اس محنت کو پاکستان لے کر آئے ہیں،انہوں نے کہا کہ چین کو دو دہائیاں پیچھے مڑ کر دیکھیں پاکستان کے حالات کی طرح کا تھا آج چین اپنے اوورسیز چائنا کی وجہ سے چین بنا ہے۔پاکستان بھی اوورسیز پاکستانیوں کی محنت اور محبت سے پاکستان بنے گا بدقسمتی سے ابھی تک اوورسیز پاکستانیوں کو یہ سہولیات نہیں ملی تھیں کہ وہ اپنا سرمایہ پاکستان میں لاتے ،موجودہ حکومت نے یہ سہولیات فراہم کی ہیں اب ان شائ اللہ سرمایہ پاکستان میں لگے گا۔

معروف صحافی سہیل وڑائچ نے کہا کہ اسے چھوٹی سرمایہ کاری نا سمجھئے یہ بڑی سرمایہ کاری ہے س سے مغرب کے دروازے پاکستان میں کھل گئے ہیں ۔میں مہر امانت حسین اور لاہور کے شہریوں کو مبارک باد دیتا ہوں کہ لاہور وہ پہلا شہر ہے یہاں کندس نے اپنا سٹور کھولا ہے جو اسپین کی بڑی معروف کمپنی ہے۔

معروف صحافی دانشور مجیب الرحمن شامی نے کہا کہ میری دعائیں چوہدری امانت حسین مہر کے ساتھ ہیں میں سمجھتا ہوں کہ ان کے آنے سے اسپین کے ساتھ تجارت کے دروازے کھلے ہیں ،اور ضرورت اس بات کی ہے کہ اوورسیز پاکستانیوں میں اعتماد پیدا ہو ،وہپاکستان میں سرمایہ کاری کریں اور پاکستان کے مستقبل کو سنواریں پاکستان اور اوورسیز پاکستانیوں کی ترقی لازم وملزوم ہے۔ مجھے امید ہے کہ بہت ہی مبارک گھڑی کھلنے والا یہ اسٹور کامیاب ہوگا اور پاکستان بھر میں اس کی برانچیں بنیں گی۔

کندس پاکستان کی افتتاحی تقریب میں گورنر پنجاب چوہدری محمد سرور،کندس اسپین کے ڈائریکٹر مانیل رومیرو  کو یاد گاری شیلڈ زپیش کیں۔افتتاحی تقریب کے آخری حصہ میں اسپانش اور پاکستانی میوزک کا تڑکا بھی لگایا گیا ۔جسے سن کر حاضرین خوب محظوظ ہوئے۔برطانیہ سے دنیا نیوز یوکے کے ہیڈ انٹرنیشنل نیوز آپریشنز اظہر جاوید نے خصوصی شرکت کی ان کے علاوہ دیگر ممالک میں اٹلی سے معروف پاکستانی سماجی شخصیت بشیر بوسال ،عباس بوسال ،بابر سہیل،ہالینڈ سے لارڈ پاشا،اسپین سے چوہدری محمد زمان ،چوہدری عابد رحمن رانجھا ،چوہدری شوکت علی، سرفراز سبحانی چوہدری عظمت حسین مہر  اور رضوان کاظمی نے دوستوں کے ہمراہ تقریب میں شرکت کی۔

مزید : علاقائی /پنجاب /لاہور