مولانا فضل الرحمان کا خطاب شروع ہوتے ہی بارش برسنا شروع ہوئی تو انہوں نے کیا کہا ؟جان کر حکومت کی تشویش میں اضافہ ہو جائے گا

مولانا فضل الرحمان کا خطاب شروع ہوتے ہی بارش برسنا شروع ہوئی تو انہوں نے کیا ...
مولانا فضل الرحمان کا خطاب شروع ہوتے ہی بارش برسنا شروع ہوئی تو انہوں نے کیا کہا ؟جان کر حکومت کی تشویش میں اضافہ ہو جائے گا

  



اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن )جمعیت علما اسلام ف کے سربراہ مولانا فضل الرحمان نے آزادی مارچ جلسے سے خطاب کا آغاز کیا تو بارش شروع ہو گئی جس پر انہوں نے کہا کہ یہ مبارک اجتماع ہے جو قانون  ناموس رسالتﷺ  کے خلاف سازش کرنے والوں کے خلاف جمع ہے تو باران رحمت بھی برس پڑی ہے ۔اسلام آباد میں آزادی ما رچ سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ اسلام آباد میں کسی ایک پارٹی کا اجتماع نہیں بلکہ یہ ساری قوم کا اجتماع ہے جو دنیا پر واضح کررہاہے کہ پاکستان پر حکمرانی کرنے کاحق پاکستا ن کے عوام کا ہے ، کسی ادارے کا عوام پر مسلط ہونے کا حق نہیں ہے۔ان کا کہنا تھا کہ میں اجتماع میں آنیوالے تمام کارکنوں ، تمام سیاسی جماعتوں کے قائدین کوخوش آمدید کہتا ہوں، یہ سنجیدہ اجتماع ہے اور پوری دنیا اس کو سنجیدگی سے لے ، ہم یہ فیصلہ کررہے ہیں کہ ہم اس ملک میں عدل پر مبنی نظام چاہتے ہیں جو انصاف پر مبنی ہوتوپھر عوام کاحق ہے کہ اس فیصلہ کرے۔ اس دوران بارش شروع ہوئی تو انہوں نے کہا کہ یہ ربیع الاول کا مہینہ ہے ،اس مبارک مہینے میں ہم اجتماع کا آغاز کررہے ہیں، اس وقت ختم نبوتﷺ کے خلاف سازشوں کی کوشش کی جا رہی ہے ،ہم ایسے سازشی عناصر کے خلاف جمع ہوئے ہیں ۔

مزید : قومی