آرمی چیف کا زور مذاکرات پرتھا، انکی برکتوں سے سارا کام ہو گیا، بشیر فاروقی

  آرمی چیف کا زور مذاکرات پرتھا، انکی برکتوں سے سارا کام ہو گیا، بشیر فاروقی

  

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک)کالعدم تحریک لبیک پاکستان (ٹی ایل پی) سے مذاکراتی کمیٹی کے رکن و سیلانی ویلفیئر ٹرسٹ کے سربراہ مولانا بشیر فاروقی نے کہا ہے کہ آرمی چیف طاقت کے استعمال کے حق میں نہیں تھے بلکہ اْن کا زور مذاکرات پر تھا۔مولانا بشیر فاروقی نے کہا کہ آرمی چیف ایک ہزار فیصد چاہتے ہیں کہ اس ملک میں امن ہو جائے۔ان کا کہنا تھاکہ آرمی چیف کا زور مذاکرات پرتھا، اْن کی برکتوں سے سارا کام ہو گیا، جو معاہدہ ہوا ہے اْس میں ہزار فیصد کردار آرمی چیف کا ہے۔خیال رہے کہ وفاقی حکومت اور کالعدم تحریک لبیک پاکستان (ٹی ایل پی) کے درمیان معاملے طے پا گئے ہیں۔ذرائع کے مطابق حکومتی وفد اور کالعدم تنظیم کی قیادت کے درمیان رات گئے مذاکرات ہوئے، حکومتی وفد میں شاہ محمود قریشی، اسد قیصر اور علی محمد خان شامل تھے جبکہ مذاکرات میں کالعدم تنظیم کے سربراہ سعد رضوی بھی شریک تھے۔بعدازاں پریس کانفرنس میں بھی مذاکرات کی کامیابی کا اعلان کیا گیا۔

بشیر فاروقی

مزید :

صفحہ اول -