سائبر حملے کے بعد ڈیجیٹل بینکنگ میں کوئی خلل نہیں آیا، ون لنک

سائبر حملے کے بعد ڈیجیٹل بینکنگ میں کوئی خلل نہیں آیا، ون لنک

  

کراچی (مانیٹرنگ ڈیسک) پاکستانی بینکوں کے کنسورشیم ون لنک نے تصدیق کی ہے کہ نیشنل بینک آف پاکستان (این بی پی) کے سرور پر سائبر حملے کے باوجود پاکستان میں بینکنگ کے نظام میں کوئی تعطل پیدا نہیں ہوا۔ تمام فنانشل اور نان فناشنل ٹرانزیکشنز محفوظ طریقے سے مکمل ہوئیں اور ان میں جمعرات سے اب تک کوئی خلل پیدا نہیں ہوا، ٹرانزیکشنز کی تعداد دیکھ کر پتہ چلتا ہے کہ صارفین پہلے کی طرح ہی سہولیات سے فائدہ اٹھا رہے ہیں۔ون لنک کا کہنا ہے کہ اس کی جانب سے یہ وضاحت افواہوں کے تدارک اور صارفین کی تسلی کیلئے کی گئی  ہے تاکہ انہیں یہ یقین رہے پاکستان کا پیمنٹ سسٹم اور ڈیجیٹل بینکنگ محفوظ ہے، نہ تو کسی کسٹمر کا ڈیٹا لیک ہوا اور نہ ہی ون لنک کے کسی رکن بینک نے اس کی شکایت کی ہے۔ون لنک سمیت تمام بینک صورتحال کو قریب سے دیکھ رہے ہیں، بینکنگ صارفین اطمینان کے ساتھ اپنی ٹرانزیکشنز کر سکتے ہیں لیکن صارفین ڈیجیٹل بینکنگ کے دوران تمام احتیاطی تدابیر ضرور اختیار کریں۔خیال رہے نیشنل بینک آف پاکستان کے سرور پر سائبر حملہ کیا گیا تھا۔  29اکتوبر کی رات اور 30 اکتوبر کی صبح کے درمیان  ہونے والے سائبر حملے سے بینک خدمات کا سلسلہ جزوی طور پر متاثر ہوا تاہم متاثرہ سسٹم کو بروقت الگ کر دیا گیا، سائبر حملے میں بینک کو کسی قسم کے ڈیٹا یا مالیاتی نقصان کا سامنا نہیں کرنا پڑا۔

 ون لن

مزید :

صفحہ اول -