لودھراں:چار روز میں 7ڈاکے، لوٹ مار، شہری خوفزدہ

  لودھراں:چار روز میں 7ڈاکے، لوٹ مار، شہری خوفزدہ

  

لودھراں (نمائندہ پاکستان)لودھراں ڈاؤکوں نے4 روزمیں 7وارداتیں کیں مزاحمت پر تاجر کو گولیاں مار دیں گئیں گذشتہ چار روز سے لودھراں شہر میں 125 موٹر سائیکل سوار ڈاکوں نے ات مچائی ہوئی ہے اور چار روز میں ڈکیتی کی سات وارداتیں ہوچکی ہیں پہلی واردات (بقیہ نمبر35صفحہ6پر)

27 اکتوبر کوڈی پی او آفس  اورڈپٹی کمشنر ہاس سے ملحقہ مارکیٹ میں ہوئی جس میں دن دیہاڑے تقریبا 12 بجے  مشہور گفٹ شاپ سے دو نامعلوم مسلح موٹر سائیکل سوار ڈاکو گن پوائنٹ پر پچاس ہزار نقدی اور قیمتی کھلونے بوری میں بھر کر لے گئے ڈکیتی کی دوسری واردات دن تقریبا ایک بجے کے قریب لودھراں شہرکے مین بازار کی گلی نمبر 3 میں واقع سلائی مشین کی دوکان پرہوئی جس میں دو نا معلوم مسلح موٹر سائیکل سوار ڈاکو اسلحہ کے زور پر سلائی مشین لوٹ کر لے گئے ڈکیتی کی تیسری واردات جلالپور روڈ پر بستی غریب آباد میں ہوئی جس میں لودھراں تین مسلح ڈاکوں نے گن پوائنٹ پر اللہ وسایا نامی زمیندار سے اس کی نئی موٹر سائیکل ہنڈا 125 چھین لی اور مزاحمت پر تشدد کرکے زمیندار کوزخمی کردیا اور فرار ہوگئے چوتھی واردات جیون والا میں ہوئی جس میں ڈاکو صبح ساڑھے سات بجے کریانہ مرچنٹ سے گن پوائنٹ پر سات ہزار لوٹ کر فرار ہوگئے پانچویں واردات لودھراں شہر کے مرکزی بازار میں ہوئی جس میں موٹر سائیکل سوار 2 ڈاکوں نے کریانہ مرچنٹ سے ایک لاکھ نقدی اور بیس ہزار کا ڈرائی فروٹ لوٹ لیا اور مزاحمت پر اسے دو گولیاں مار کر فرار ہوگئے چھٹی واردات میلاد چوک کے قریب پیش آئی جس میں مسلح افراد موبائل کی ایک دوکان سے 7 لاکھ سے زائد کے موبائل فونز اور نقدی چوری کرکے لے گئے ڈکیتی کی ساتویں واردات اتوار کی شام تقریبا 6 بجے گرلز ڈگری کالج کے قریب پیس آئی جس مین موٹر ساءئکل سوار دو مسلح ڈاکوں نے نوجوان عمار سعید سے گن پوائنٹ پر قیمتی موبائل فون چھین لیا اور فرار ہوگئے انجمن تاجران نے گذشتہ روز لودھراں میں دن دیہاڑے ڈکیتی کی بڑھتی ہوئی وارداتوں پر مین بازار میں شٹرڈان ہڑتال کرکے ریلوئے چوک میں دھرنا دیا تھا اور ڈاکوں کی گرفتاری اور ایس ایچ او کی معطلی کا مطالبہ کیا تھا لیکن نہ تو تاحال ڈاکو گرفتار ہوسکے ہیں اور نہ ہی ایس ایچ او سٹی معطل ہوسکا ہے لودھراں میں دن دیہاڑے سرعام ڈکیتی کی بڑھتی ہوئی وارداتوں پر شہری عدم تحفظ  کا شکار اور خوف و حراس میں مبتلا ہوگئے ہیں۔

وارداتیں 

مزید :

ملتان صفحہ آخر -