ڈاکٹر شہباز گل نے خواجہ آصف کو نورا کشتی کا بے تاج بادشاہ قرار دیتے ہوئےکھری کھری سنا دیں 

ڈاکٹر شہباز گل نے خواجہ آصف کو نورا کشتی کا بے تاج بادشاہ قرار دیتے ہوئےکھری ...
ڈاکٹر شہباز گل نے خواجہ آصف کو نورا کشتی کا بے تاج بادشاہ قرار دیتے ہوئےکھری کھری سنا دیں 

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)وزیر اعظم عمران خان کے معاون خصوصی ڈاکٹر شہباز گل نے  کہا ہے کہ ن لیگی رہنما خواجہ آصف کو نورا کشتی کا بے تاج بادشاہ قرار دیتے ہوئےکہا ہے کہ  خواجہ آصف کا یہ کہنا کہ مجھے آصف علی زرداری پر یقین نہیں ہے سے زیادہ مضحکہ خیز بات ہے کہ انہیں نواز شریف پر یقین ہے،یہ وہی جناب ہیں جنہوں نے بیڑے غرق کرنے میں کلیدی کردار ادا کیا تھا اور میاں صاحب کو ہلہ شیری دے کر مروایا تھا۔

تفصیلات کے مطابق مائیکرو بلاگنگ ویب سائٹ پر ٹویٹ کرتے ہوئے ڈاکٹر شہباز گل نےمسلم لیگ ن کے سینئر رہنما خواجہ آصف کی جانب سے آصف زرداری پر عدم اعتماد کے بیان پر اُنہیں شدید تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ مجھے آصف علی زرداری پر یقین نہیں ہے سے زیادہ مضحکہ خیز بات ہے کہ انہیں نواز شریف پر یقین ہے، یہ وہی جناب ہیں جنہوں نے بیڑے غرق کرنے میں کلیدی کردار ادا کیا تھا اور میاں صاحب کو ہلہ شیری دے کر مروایا تھا کہ میاں صاحب لوکی پنامہ شنامہ چند دنوں ہفتوں میں بھول جائیں گے۔انہوں نے کہا کہ  یہ ہیں وہ رنگباز جو سمجھتے ہیں کہ عوام بے وقوف ہے،جنہوں نے ایک دوسرے کو سڑکوں پر گھسیٹنا تھا، کوئی زر بابا چالیس چور تھا، کوئی کسی کو ضیاء الحق کی اولاد کہتا تھا ،آج ایک دوسرے کے ترجمان بنے ہوئے ہیں ، شکریہ خان صاحب ان فرضی بچھڑے ہوؤں کو اصلی میں ملانے پر۔

ڈاکٹر شہباز گل نے اپنے ایک دوسرے ٹویٹ میں کہا کہ قوم جانتی ہے کہ نواز شریف کتنے نظریاتی ہیں ؟ضیاءالحق سے مشرف این آراو  تک آپ کا نظریہ اپنی ذات تک ہے،کرپشن کرکے بیٹوں اور سمدھی سمیت اشتہاری عزت کی بات کرتے ہیں،ایون فیلڈ اپارٹمنٹس میں عیاشی کرنے والے آج نظریاتی بن رہے ہیں ،لندن میں معزز عدلیہ اور اداروں کے خلاف پراپیگنڈا کیا جا رہا ہے،نواز شریف ملک دشمنوں کی ایماء پر  غیر ملکی بیانئے کو تقویت دے رہے ہیں۔

یاد رہے کہ سینئر نون لیگی رہنما  خواجہ آصف نے نجی ٹی وی کے پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ انہیں آج بھی آصف زرداری پر تحفظات ہیں، ان کی آصف علی زرداری کے بارے میں رائے تبدیل نہیں ہوئی، میں بار بار کہوں گا کہ مجھے آصف زرداری پر یقین نہیں ہے۔"

مزید :

علاقائی -اسلام آباد -