گجوخان میڈیکل کالج صوابی سے کروڑوں کی قیمتی اشیا ء غائب 

  گجوخان میڈیکل کالج صوابی سے کروڑوں کی قیمتی اشیا ء غائب 

  

صوابی(رپورٹ: محمد شعیب)گجو خان میڈیکل کالج شاہ منصور (صوابی) سے سٹاک رجسٹر سمیت سٹور سے کروڑوں روپے مالیت کی قیمتی بیالوجیکل اور دیگر طبی آلات غائب ہو گئے۔ انتظامیہ نے تین اہلکاروں کو معطل کر کے ان کے خلاف تحقیقات شروع کر دی جبکہ انتظامیہ نے فوری طور پر متعلقہ اہلکاروں سے غائب ہونے والے قیمتی آلات اور دیگراشیاء کا پتہ لگانے کے لئے تین معطل اہلکاروں کو لیٹر جاری کیا ہے جس میں ان سے جلد سے جلد سپلائرز کمپنی سے غائب ہونے والے اشیاء کی خریداری لسٹ فراہم کر کے کالج ہذا کے پرنسپل آفس میں جلد سے جلد جمع کرنے کی ہدایت کی ہے۔ بصورت دیگر ان کے خلاف سخت قانونی کارروائی کا عندیا دیا گیا ہے۔ اس سے قبل گجو خان میڈیکل کالج صوابی سے تیس عدد قیمتی لیپ ٹاپ بھی غائب ہو چکے تھے۔ تفصیلات کے مطابق گذشتہ روز گجو خان میڈیکل کالج صوابی میں سٹاک رجسٹر کے علاوہ کئی اہم اشیاء اور قیمتی آلات کے غائب ہونے کا انکشاف ہوا جس میں کروڑوں روپے مالیت کی قیمتی اور کئی اہم اشیاء اور آلات کالج کے سٹور سے غائب کئے جا چکے ہیں گجو خان میڈیکل کالج کے وائس پرنسپل نے تین متعلقہ سٹور کیپرز کے نام شکایتی مراسلہ بھی جاری کر دیا ہے۔قیمتی آلات غائب ہو جانے پر کالج انتظامیہ نے انکوائری جاری کر دی ہے سٹور کیپرز کو کالج کے لئے خریدے گئے بائیو میڈیکل آلات، اوزار اور فر نیچر کی لسٹ فوری طور پر تیار کرنے کے احکامات جاری کر دیئے اور یہ لسٹ کالج انتظامیہ کو فراہم کرنے کی ہدایت جاری کر دی گئی۔مراسلہ میں کہا گیا ہے کہ لسٹ جمع نہ کرنے کی صورت میں قانون کے مطابق کارروائی کی جائے گی۔پرنسپل گجو خان میڈیکل کالج ڈاکٹر فصیح الزمان نے میڈیا کو بتایا کہ فرائض میں غفلت اور کوتاہی برتنے پر چاروں اہلکاروں کو معطل کردیا گیا ہے۔   

مزید :

پشاورصفحہ آخر -