ضلع تورغراور قبائلی ضلع اور کزئی کے لئے گندم کاسرکاری کوٹہ منظور، میاں خلیق الرحمان 

ضلع تورغراور قبائلی ضلع اور کزئی کے لئے گندم کاسرکاری کوٹہ منظور، میاں خلیق ...

  

پشاور(سٹاف رپورٹر)وزیراعلی خیبر پختونخوا کے مشیر برائے محکمہ خوراک میاں خلیق الرحمان نے صوبے میں پہلی دفعہ گندم کی ترسیل کے لئے پولی تھیں۔ بیگز استعمال کرنے کیلئے ٹینڈر کی باقاعدہ طور پر منظوری دی ہے، جس سے گندم کے معیار کو  شفاف طریقے سے چیک کیا جا سکے گا۔ انہوں نے ضلع تورغر اور قبائلی ضلع اورکزئی کی فلور ملوں کو سرکاری کوٹہ کے تحت گندم کی سپلائی کی بھی منظوری دی ہے جبکہ عوام کی صحت کو بہتر بنانے کیلئے پشاور میں حیات آباد کے تندوروں میں مکس (سادہ) آٹا کے استعمال کو بطور پائلٹ پراجیکٹ شروع کرنے کی بھی منظوری دی ہے۔ ان احکامات کی منظوری مشیر خوراک نے محکمہ خوراک کے ایک  اعلیٰ سطح اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے دی۔ اجلاس میں سیکرٹری محکمہ خوراک خوشحال خان، ودیگر اعلی حکام بھی موجود تھے۔ سیکرٹری محکمہ خوراک نے اجلاس کو تمام امور پر تفصیلی بریفننگ دی ہے۔ اس موقع پر مشیر خوراک نے صوبے بھر کے تمام ڈسٹرکٹ فوڈ کنٹرولرز کو ہدایات جاری کرتے ہوئے کہا ہے کہ ضلعی آفیسرز تندوروں پر واضح جگہ میں پرائس لسٹ اور ڈیجیٹل سکیل کی دستیابی یقینی بنائیں۔ انہوں نے کہا کہ تندوروں کے باقی تمام اشیاء خوردونوش کی دکانوں اور مقامات پر بھی واضح جگہ پر پرائس لسٹ آویزاں کرنے کو یقینی بنایا جائے۔ اجلاس کے دوران مشیر خوراک نے عوام سے بھی اپیل کی ہے کہ محکمہ خوراک کے ضلعی انتظامیہ اور اشیائے خوردونوش کی قیمتوں کے حوالے سے کسی بھی قسم کی شکایات براہ راست فوڈ ڈائریکٹوریٹ یا منسٹر آفس میں جمع کرائی جاسکتی ہے نیز پاکستان سیٹزن پورٹل، وزیراعلی کمپلینٹ سیل اور ضلعی انتظامیہ کے سوشل میڈیا پلیٹ فارمز پر بھی شکایات کا  ازالہ ممکن بنایا جائیگا۔ میاں خلیق الرحمان نے کہا ہے کہ محکمہ خوراک اور شہریوں کے درمیان روابط استوار کرنے کے لئے بھرپور اقدامات کر رہے ہیں۔ عوام کو ریلیف دینے کے لیے وزیراعلی خیبرپختونخوا محمود خان کی قیادت میں محکمہ خوراک تمام اقدامات بروئے کار لا رہا ہے۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -