صوابی،مختلف واقعات میں 2 جاں   بحق،قانون دان نعیم خان زخمی

صوابی،مختلف واقعات میں 2 جاں   بحق،قانون دان نعیم خان زخمی

  

صوابی(بیورورپورٹ) مختلف واقعات میں دو افراد جاں بحق ہو گئے۔جب کہ فائرنگ سے ممتاز قانون دان نعیم خان زخمی ہو گیا۔ پولیس رپورٹ کے مطابق سٹیفا نہر سے ایک سر کٹی لاش بر آمد ہوئی۔ لاش کو فوری طور پر ضلعی ہسپتال صوابی منتقل کر دیا گیا۔ لاش کی شناخت اور وجہ قتل معلوم نہ ہو سکی صوابی پولیس نے مصروف تفتیش ہے دریں اثناء صوابی انٹر چینج کے قریب ٹریکٹر ٹرالی کی ٹکر سے شدید زخمی ہونے والا نوجوان محمد صہیب زخموں کی تاب نہ لا کر چل بسا متوفی شیخ القر آن والحدیث مولانا عبدالحئی کے اکلوتے صاحبزادے تھے متوفی کو گذشتہ شب اپنے آبائی گاؤں تورڈھیر میں سپرد خاک کر دیا گیا۔دریں اثناء موضع مناگی میں مبینہ فائرنگ سے نعیم خان ایڈوکیٹ شدید زخمی ہو گئے پولیس نے وجہ عناد پرانی دشمنی بیان کی ہے۔ پولیس نے الگ الگ رپورٹ در ج کر کے تفتیش شروع کر دی ہے۔ریسکیو 1122کی رپورٹ کے مطابق صوابی ٹوپی روڈ پر مینئی چوک کے قریب موٹر سائیکل کی ٹکر سے بیس سالہ نوجوان فرقان، صوابی مردان روڈ پر سلیم خان سٹاف کے قریب موٹر کار اور رکشے کے درمیان تصادم کے نتیجے میں پچیس سالہ عبداللہ، بائیس سالہ نجم الدین، رضوان اللہ اور بیس سالہ فرحان اللہ جب کہ شیوہ روڈ پر آسوٹا شریف سٹاف پر دو موٹر سائیکل آپس میں ٹکرانے سے اکتالیس سالہ نیاز علی اور ستائیس سالہ شہاب زخمی ہو گئے تمام زخمیوں کو ریسکیو 1122کی میڈیکل ٹیم نے موقع پر طبی امداد دے کر مقامی ہسپتالوں کو منتقل کر دیا۔ 

مزید :

پشاورصفحہ آخر -