ڈائریکٹر جنرل کا میاں جمیل کے خط کو عدالت میں چیلنج کرنیکا اعلان 

        ڈائریکٹر جنرل کا میاں جمیل کے خط کو عدالت میں چیلنج کرنیکا اعلان 

  

 ملتان (سپیشل رپورٹر)چیئرمین ایم ڈی اے میاں جمیل احمد نے ڈائریکٹر جنرل ایم ڈی اے کے اختیارات سے تجاوز کرنے اور مبینہ طور پر بے ضابطگیوں میں ملوث ہونے پرآغا محمد علی عباس سے تحریری طور پر لکھے گئے خط کے ذریعے جواب بھی طلب کر لیا  - ڈائریکٹر (بقیہ نمبر9صفحہ 6پر)

جنرل ایم ڈی اے نے چئیرمین ایم ڈی اے کے تحریری خط کو عدالت میں چیلنج کرنے کا اعلان کر دیا اور چئیرمین کی جانب سے جواب طلب کرنے کے اختیارات پر بھی سوالات اٹھا دئیے ہیں۔ تفصیلات کے مطابق ایم ڈی اے کی ہاؤسنگ اسکیم ماڈل ٹاؤن میں ڈسپوزل کی اراضی کی چند روز قبل نیلامی کی گئی - جس پر چئیرمین ایم ڈی اے میاں جمیل احمد نے ڈی جی آغا محمد علی عباس سے 3 دن میں الزامات کا جواب جمع کروانے کے لئے خط لکھ دیا ہے - خط میں کہا گیا ہے کہ ڈی جی  ایم ڈی اے نے ماڈل ٹاؤن ہاؤسنگ کالونی میں اختیارات سے تجاوز کیا، آغا محمد علی عباس نے پلاٹ کی نیلامی میں قوانین کو نظر انداز کیا، ڈی جی ایم ڈی اے نے خلاف قانون وزیر اعلیٰ پنجاب کے اختیارات استعمال کئے - دوسری جانب ڈی جی ایم ڈی اے آغا محمد علی عباس کا کہنا ہے کہ 82 ویں اور 83 ویں گورننگ باڈی کے اجلاس جس کی صدارت خود چیئرمین ایم ڈی اے میاں جمیل احمد نے کی اور اس پلاٹ کی باقاعدہ منظوری ملنے کے بعد پلاٹ کی نیلامی کی گئی، کسی قسم کے قواعد کو نظر انداز نہیں کیا گیا - آغا محمد علی عباس نے لیٹر کو عدالت میں چیلنج کرنے کا اعلان کرتے ہوئے کہا کہ چیئرمین ایم ڈی اے انتظامی معاملات میں مداخلت نہیں کر سکتے۔ہماری محکمانہ اسیسمنٹ کمیٹی نے ریزرو پرائس مقرر کی تھی، قواعد کی خلاف ورزی نہیں کی گئی۔ان کا کہنا ہے کہ وہ چیئرمین ایم ڈی اے کی محکمانہ امور میں مداخلت کو ہر قانونی فورم پر اٹھائیں گے۔

جواب طلب

مزید :

ملتان صفحہ آخر -