35 کروڑ روپے تاوان کیلئے اغواءہونے والے باپ بیٹا بازیاب

35 کروڑ روپے تاوان کیلئے اغواءہونے والے باپ بیٹا بازیاب
35 کروڑ روپے تاوان کیلئے اغواءہونے والے باپ بیٹا بازیاب

  

خوشاب (ڈیلی پاکستان آن لائن) دوہری شہریت کے حامل مغوی باپ بیٹے کو  بازیاب کرالیا گیا، ملزمان نے بازیابی کے لیے 35کروڑ روپے  تاوان کا مطالبہ کیا تھا،  ڈی پی او خوشاب اسدالرحمان  نے مغویان کی بازیابی کے لیے آپریشن کو خود لیڈ کیا۔

 آرپی او سرگودھااظہر اکرم  نے ڈی پی او آفس خوشاب میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے بتایا کہ 29اگست کو   نامعلوم ملزمان نے   تھانہ سٹی جوہر آباد 45/AMB  نیشنل کالونی کے رہائشی   محمد رشیدولد شیر عالم قوم راجپوت بعمر70سال اور  محمد احسن ولد واجد حسین قوم راجپوت بعمر16سال جو کہ دونوں پاکستانی نژاد برطانوی شہری ہیں ، کو اغواء کر لیا  تھا جس پر تھانہ سٹی جوہرآباد میں فوری طور پر  مقدمہ نمبر473/22 بجرم 365-Aت پ درج کر کے تفتیش شروع کی گئی۔ ملزمان نے مغویان کی حوالگی کے لیے 35 کروڑ روپے تاوان کا مطالبہ کیا تھا۔

انہوں نے بتایا کہ وقوعہ کی سنگینی کے پیش نظر  ڈی پی او  خوشاب کی زیرنگرانی خصوصی ٹیمیں تشکیل دی گئیں جنہوں نے تمام پہلوؤں کو مدنظر رکھتے ہوئے تفتیش کا آغاز کیا۔ اس سلسلہ میں خیبر پختونخوا  پولیس اور دیگر سیکیورٹی ایجنسیز  کی سپورٹ حاصل رہی۔  ٹیموں  کے پیش نظر مغویان کی بحفاظت بازیابی سب سے اہم مقصد تھا۔ ڈی پی او خوشاب نے مغویان کی بازیابی کے لیے آپریشن کو خود لیڈ کیا اور خوشاب پولیس کی شبانہ روز محنت کی بدولت دونوں مغویان کو بحفاظت بازیاب کر لیا گیا ہے۔ملزمان ٹریس ہو چکے ہیں جن کے خلاف قانون کے مطابق کاروائی عمل میں لا کر عدالت میں پیش کر کے سخت سے سخت سزا دلوائی جائے گی۔

مزید :

جرم و انصاف -علاقائی -پنجاب -سرگودھا -