پشاور،متنی بازار میں بم دھماکہ،12افراد جاں بحق 18زخمی

پشاور،متنی بازار میں بم دھماکہ،12افراد جاں بحق 18زخمی

  

پشاور(این این آئی)پشاور کے نواحی علاقے متنی بازار میں دھماکہ کے نتیجے میں 11 افراد جاں بحق جبکہ سولہ زخمی ہوگئے ۔زخمیوں کوقریبی ہسپتال منتقل کردیاگیا ہسپتال ذرائع کے مطابق زخمیوں میں بعض کی حالت نازک ہے تاہم انہیں طبی امدادی جاری ہے۔پولیس ذرائع کے مطابق دھماکا ایک ڈبل کیبن گاڑی کے قریب ہوا ہے، مقامی ذرائع کے مطابق دھماکا خیز مواد اسی گاڑی کے اندر موجود تھا تاہم اسکی پولیس اور دیگر تفتیشی اداروں نے تصدیق نہیں کی ہے۔پولیس ،امدادی ادارے اور بم ڈسپوزل اسکواڈ جائے دھماکا پر پہنچ کرامدادی کارروائیاں شروع کردیں جبکہ جاںبحق اورزخمیوںہونےوالے افرا دکوہسپتال منتقل کردیاہے۔بم ڈسپوزل سکواڈ کے مطابق دھماکہ میں 30سے چالیس کلوگرام بارودی مواد استعمال کیاگیا ہے،جوکہ گاڑی میں رکھاگیا تھا۔ہسپتال ذرائع کے مطابق دھماکہ میں جاں بحق ہونےوالوں کی تعداد نوہوگئی ہے تاہم بعض زخمیوں کی حالت نازک بتائی جاتی ہے ۔ دھماکے کے بعد مقامی بازار بند ہوگیا ہے ۔دھماکہ کے بعد شہر بھر میں میں خوف و ہراس پھیل گیا ۔ دھماکہ کے بعد پولیس اورقانون نافذ کرنےوالے اداروں نے علاقے کوگھیرے میں لے لیا وزیراعلیٰ خیبرپختونخوا امیرحیدرخان ہوتی نے متنی دھماکہ کی شدید مذمت کرتے ہوئے جانی نقصان پر افسوس کیا ہے ۔خیبر پختونخوا کے وزیر اطلاعات و تعلقات عامہ میاں افتخار حسین نے بم دھماکے کی شدید مذمت کرتے ہوئے اسے درندہ صفت عناصر کی وحشیانہ کارروائی قرار دیاہے۔انہوں نے کہاکہ معصوم اور بےگناہ لوگوں کانا حق خون بہانے والے کسی طور مسلمان کہلانے کے مستحق نہیں بلکہ یہ ایسے وحشی حیوان ہیں جنہیں اپنا عبرتناک انجا م قریب نظر آ رہا ہے اور یہ بوکھلاہٹ میں سنگدلانہ کارروائیاں کر کے لوگوں کانا حق خون بہا رہے ہیں جس پر انہیں دنیااور آخرت دونوں میں عبرتناک انجام کا سامناکرنا پڑے گاجبکہ عوام کے بھرپور تعاون اور حمایت سے دہشت گردوں کے گرد گھیرا مزید تنگ کر کے آخری دہشت گرد کے خاتمے تک دہشت گردی کے خلاف ہماری جنگ جاری رہے گی۔

مزید :

صفحہ اول -