افریقی ملک لیسوتھو میں فوج نے حکومت کا تختہ الٹ کراقتدار پر قبضہ کرلیا

افریقی ملک لیسوتھو میں فوج نے حکومت کا تختہ الٹ کراقتدار پر قبضہ کرلیا

مسیرو(این این آئی)افریقی ملک لیسوتھو میں فوج نے بغاوت کرتے ہوئے ملک کا کنٹرول سنبھال لیا ہے جبکہ وزیر اعظم ٹام تھابین فرار ہو کر پڑوسی ملک جنوبی افریقہ میں پناہ لینے پر مجبور ہوگئے ۔ فوج نے وزیر اعظم ہاو¿س کا کنٹرول سنبھال لیا اور فوجی دستے دارالحکومت کی سڑکوں پر گشت کر رہے ہیں جب کہ تمام ریڈیو اسٹیشن اور مواصلاتی نیٹ ورک بند کردیئے گئے،ادھر حکمراں جماعت باسوتھونیشنل پارٹی نے الزام عائد کیا ہے کہ نائب وزیراعظم فوجی بغاوت میںملوث ہیں،غیر ملکی ذرائع ابلاغ کے مطابق فوج نے وزیر اعظم ہاو¿س کا کنٹرول سنبھال لیا اور فوجی دستے دارالحکومت کی سڑکوں پو گشت کر رہے ہیں جب کہ تمام ریڈیو اسٹیشن اور مواصلاتی نیٹ ورک بند کردیئے گئے ، حکمران جماعت باسوتھو نیشنل پارٹی کا کہنا تھا کہ نائب وزیراعظم فوجی بغاوت کی سازش میں ملوث ہیں۔فرار ہونے والے وزیر اعظم ٹام تھابین نے کہا کہ انہیں طاقت کے بل پر اقتدار سے علیحدہ کیا گیا جو غیر آئینی اورغیر قانونی ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ میری زندگی کو خطرہ تھا جس کی وجہ سے ملک چھوڑنا پڑا تاہم جیسے ہی یہ خطرہ ٹلے گا واپس وطن لوٹ جاو¿ں گا۔

واضح رہے کہ لیسوتھو میں باسوتھو نیشنل پارٹی اور لیسوتھو کانگریس فار ڈیموکریسی کی اتحادی حکومت 2سال قبل قائم ہوئی تھی تاہم دونوں اتحادیوں میں شدید اختلافات پیدا ہوگئے تھے جس کے بعد ملک میں شدیدسیاسی بحران پیدا ہوگیا تھا اوراس کا فائدہ اٹھاتے ہوئے فوج نے ملک کا کنٹرول سنبھال کر حکومت کا تختہ الٹ دیا۔

مزید : عالمی منظر