خطرناک ایبولا وائرس ایک اور ملک پر حملہ آور

خطرناک ایبولا وائرس ایک اور ملک پر حملہ آور
خطرناک ایبولا وائرس ایک اور ملک پر حملہ آور

  

ڈاکار (نیوز ڈیسک) خوفناک ایبولا وائرس مغربی افریقہ کے چار ممالک میں تباہی پھیلاتا ہوا اب پانچویں ملک سینی گال بھی پہنچ گیا ہے۔ حکام کا کہنا ہے کہ وائرس کا انکشاف حال ہی میں ہوا ہے اور متاثرہ شخص کا تعلق گینی سے ہے۔ خیال کیا جاتا ہے کہ وہ 21 اگست سے پہلے سینی گال آیا کیونکہ اس تاریخ کے بعد گنی کے لوگوں کے سینی گال آنے پر پابندی لگادی گئی تھی۔ متاثرہ شخص کو دارالحکومت ڈاکار کے ایک ہسپتال میں محدود کردیا گیا ہے اور اس بات کی تحقیق کی جارہی ہے کہ وہ ملک میں کہاں کہاں گیا اور کس کس سے ملا تاکہ یہ معلوم ہو سکے کہ وائرس کسی اور شخص میں تو منتقل نہیں ہوا۔ دریں اثناءوائرس سے شدید متاثر ہونے والے ملک لائبیریا میں دارالحکومت کے قریب محاصرہ کئے گئے علاقے کا کنٹرول نرم کردیا گیا ہے تاہم حکام کا کہنا ہے کہ اس کا یہ مطلب نہیں کہ اس علاقے میں وائرس موجود نہیں ہے۔ واضح رہے کہ ایبولا وائرس سے اب تک 1550 لوگوں کی ہلاکت ہوچکی ہے۔

مزید :

تعلیم و صحت -