3G موبائل فونز کے خلاف ایرانی عالم کا فتویٰ

3G موبائل فونز کے خلاف ایرانی عالم کا فتویٰ
3G موبائل فونز کے خلاف ایرانی عالم کا فتویٰ

  


تہران (نیوز ڈیسک) ایران کے ایک معروف مذہبی رہنما نے موبائل فون کی 3G ٹیکنالوجی کو غیر اسلامی قرار دے دیا ہے۔ آیت اللہ ناصر مکارم شیرازی سے یہ سوال پوچھا گیا تھا کہ مناسب قوانین اور غیر اخلاقی مواد کو روکنے والی ٹیکنالوجی نہ ہونے کی صورت میں 3G ٹیکنالوجی کی اجازت دی جاسکتی ہے؟ یہ سوال اس تناظر میں اٹھایا گیا کہ ملک کے وزیر انفارمیشن ٹیکنالوجی محمود واعظی یہ ٹیکنالوجی متعارف کروانا چاہ رہے ہیں اور اس سلسلہ میں ملک کی پارلیمنٹری کمیٹی نے انہیں بلا کر ان پر جرح بھی کی ہے۔ عالم دین کا کہنا ہے کہ حکومت نے کوئی ایسے انتظامات نہیں کئے ہیں کہ جو غیر اخلاقی، فحش اور حکومت مخالف مواد کو روک سکیں لہٰذا جدید 3G ٹیکنالوجی کی اجازت نہیں دی جاسکتی کیونکہ اس کے ذریعے مذکورہ ممنوعہ سرگرمیاں سرانجام دی جاسکتی ہیں۔

مزید : سائنس اور ٹیکنالوجی