ڈیم نہ بننے سے سالانہ 25ارب کا پانی ضائع ہو جاتا ہے

ڈیم نہ بننے سے سالانہ 25ارب کا پانی ضائع ہو جاتا ہے

  

لاہور(سٹی رپورٹر) سابق وزیر مملکت انصاف و پارلیمانی امور مہرین انور راجہ نے کہا کہ حکمران روز نئے ڈیم بنانا اعلان کرتے ہیں لیکن یہاں حالت یہ ہے کہ سالانہ 25 ارب کا پانی ضائع ہوجاتا ہے،حکمرانوں کو عوام کے مسائل کا احساس نہیں ہے ، وہ صرف اپنے اقتدار بچانے میں لگے ہیں جو اب بچنا مشکل ہے، ن لیگ کے دور اقتدار میں بجلی کا بحران ختم نہ ہوسکا انہوں نے کہاکہ جے آئی ٹی کی رپورٹ کے بعد ملک کو نے کونے گو ن لیگ گوکی آواز آرہی ہے ، ہر پاکستانی ن لیگ کو حکومت سے الگ دیکھنا چاہتا ہے ، جے آئی ٹی کی رپورٹ ن لیگ کی قیادت کی اصلیت سامنے رکھ دی ،انہوں نے کہاکہ ڈیم بنانے کا روز اعلان کرنے والوں کی اصلیت عوام کے سامنے آچکی ہے ، ن لیگ حکومت کے آخری سال کونسا ڈیم بنانا چاہتی ہے

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -