ہائیکورٹ، سوشل سیکیورٹی کنٹری بیوشن میں اضافے کا نوٹیفکیشن معطل

ہائیکورٹ، سوشل سیکیورٹی کنٹری بیوشن میں اضافے کا نوٹیفکیشن معطل

  

لاہور(نامہ نگارخصوصی)لاہور ہائیکورٹ نے سوشل سکیورٹی کنٹری بیوشن میں اضافے کا نوٹیفکیشن معطل کرتے ہوئے پنجاب حکومت سے 19 ستمبر تک جواب طلب کر لیا ہے۔مسٹر جسٹس شاہد وحید نے ماسٹر ٹیکسٹائل سمیت 15ملوں کی درخواستوں پر سماعت کی۔درخواست گزاروں کے وکلاء نے عدالت کے روبرو موقف اختیار کیا کہ 17جون 2017ء کو ایک نوٹیفکیشن جاری کیا گیا ہے جس میں 22ہزار روپے تک تنخواہ والے ملازمین کا بھی کنٹری بیوشن جمع کرانے کا حکم دیا گیا ہے، حکومت پنجاب نے بلاجواز کنٹری بیوشن جمع کرانے کے لئے کم از کم تنخواہ کی حد 22ہزار روپے مقرر کرکے کنٹری بیوشن میں اضافہ کر دیا ہے، صنعتیں گزشتہ برس کی مزدور کی تنخواہ کے مطابق کنٹری بیوشن جمع کرا رہی ہیں، انہوں نے عدالت سے استدعا کی کہ سوشل سکیورٹی کنٹری بیوشن میں اضافے کا نوٹیفکیشن کالعدم کیا جائے۔

مزید :

صفحہ آخر -