20 لاکھ سے زائد فرزندان اسلام نے میدان عرفات میں وقوف عرفہ کیا

20 لاکھ سے زائد فرزندان اسلام نے میدان عرفات میں وقوف عرفہ کیا

  

مکہ مکرمہ (محمد اکرم اسد) 20 لاکھ سے زیادہ فرزندان اسلام نے میدان عرفات پہنچ کر وقوف عرفہ کیا جو حج کا عظیم رکن ہے۔ یہ فرزندان اسلام دنیا کے کونے کونے سے ’’لبیک اللھم لبیک‘‘ کے نعرے لگاتے حج کی عظم سعادت حاصل کرنے پہنچے تھے۔ موسم خوشگوار تھا بادل چھائے ہوئے تھے۔ مسجد نمرہ میں حج کا خطبہ ڈاکٹر شیخ سعد ناصر الشتری نے دیا اور ظہر و عصر کی نمازیں دو اقامت کے ساتھ علیحدہ علیحدہ پڑھیں۔ عازمین حج دن میدان منیٰ میں گزار کر فجر کی نماز ادا کرکے میدان عرفات پہنچ گئے تھے جس کا سلسلہ دوپہر تک جاری رہا۔ سفید احرام میں ملبوس خواتین و حضرات اللہ کی واحد انیت کا نعرہ لگاتے اپنے خیموں میں پہنچے۔ عرفات میں بعد نماز عصر رقت آمیز مناظر دیکھنے میں آئے کیونکہ عصر اور مغرب کے درمیان کا وقت قبولیت کا وقف گنا جاتا ہے۔ جبل رحمت پر بھی حجاج کا جم غفیر تھا ، ہر ہاتھ اپنے اللہ کے حضور اٹھا ہوا تھا اور اپنے اپنے انداز میں مانگ رہا تھا۔ رقت آمیز مناظر آنکھوں میں آنسوؤں کی جھڑیاں لگی ہوئی تھیں اور اللہ تعالیٰ سے اپنے اپنے گناہوں کی معافی کے خواستگار تھے۔ یہ سلسلہ مغرب تک جاری رہا۔ پاکستانی عازمین حج نے جہاں اپنے اور اپنے پیاروں کیلئے دعائیں کیں وہیں انہوں نے اپنے پیارے وطن پاکستان کی ترقی و خوشحالی اور سالمیت و امن وامان کے لئے بھی دعائیں کیں۔ حجاج دعاؤں سے فارغ ہوکر ایک دوسرے سے بغلگیر ہوکر ایک دوسرے کو مبارکباد د یتے رہے اور اپنے اپنے جذبات کا اظہار کررہے ہیں۔ آج حجاج مزلدفہ سے منیٰ واپسی پر شیطان کو کنکریاں ماریں گے اور قربانی کرکے حلق کرائیں گے اور پھر احرام سے آزادہوجائیں گے اور طواف اضافی کے لئے مکہ مکرمہ جائیں گے۔میدان منیٰ میں فائر پروف خیموں کی تعداد 26 لاکھ عازمین کے لئے وافر ہے۔ اندرون سعودی عرب سے کوئی دو لاکھ کے قریب سعودی مقیم غیرملکی فریضہ حج کی سعادت حاصل کررہے ہیں۔ سعودی وزارت داخلہ کے ترجمان میجر جنرل منصور الترکی نے کہا کہ ایک لاکھ سے زیادہ سکیورٹی اہلکار حجاج کرام کی حفاظت کیلئے موجود ہیں۔ مدینہ منورہ کے ہسپتالوں جو بیماری کی وجہ سے داخل ہیں ان کو براہ راست ایمبولینس کے ذریعے میدان عرفان پہنچادیا گیا۔ الترکی کے مطابق اس سال 3 لاکھ پچاس ہزار عازمین مشاعر مقدسہ ٹرین استعمال کریں گے۔ حرم شریف میں رات بھر اژدھام رہا۔ اطلاع کے مطابق ایک گھنٹے میں 2لاکھ 78ہزار افراد نماز پڑھنے والوں میں شامل تھے جبکہ ایک لاکھ 7 ہزار نے ایک گھنٹہ میں خانہ کعبہ کا طواف کیا۔ ہمیشہ کی طرح اس سال بھی سعودی حکومت نے مکہ مکرمہ، مدینہ منورہ اور مشاعر مقدسہ میں سکیورٹی کے اعلیٰ انتظامات کررکھے تھے اور کسی بھی ناگہانی صورتحال سے نمٹنے کے لئے چوکس ہیں۔ اس طرح اللہ کے مہمانوں کو طبی سہولتیں دینے کے بھی خصوصی انتظامات ہیں جن میں مشاعر مقدسہ میں ہسپتال، موبائل ہسپتال اور ڈسپنسریاں قائم ہیں رضاکار بھی عازمین حج کی رہنمائی کیلئے ڈیوٹی سرانجام دے رہے ہیں۔

عرفہ

مزید :

صفحہ اول -