خبردار! اگلی مرتبہ فیس بک میسنجر پر دوستوں کی جانب سے بھیجی جانے والی ویڈیو کھولنے سے پہلے یہ خبر ضرور پڑھ لیں، بڑا خطرہ!

خبردار! اگلی مرتبہ فیس بک میسنجر پر دوستوں کی جانب سے بھیجی جانے والی ویڈیو ...
خبردار! اگلی مرتبہ فیس بک میسنجر پر دوستوں کی جانب سے بھیجی جانے والی ویڈیو کھولنے سے پہلے یہ خبر ضرور پڑھ لیں، بڑا خطرہ!

  

سان فرانسسکو(نیوز ڈیسک) فیس بک میسنجر پر کسی دوست کی جانب سے بھیجی گئی ویڈیو کا میسج دیکھتے ہی اکثر لوگوں کا چہرے پر مسکراہٹ آ جاتی ہے، لیکن کہیں ایسا نہ ہو کہ اگلی بار آپ اس ویڈیو کو کھولنے کی کوشش کریں اور آپ کی مسکراہٹ گہری اداسی میں بدل جائے۔جی جناب، یہ بالکل ممکن ہے کیونکہ سکیورٹی ماہرین نے خبر دار کیا ہے کہ فیس بک میسنجر پر ویڈیو لنکس کے ذریعے ایک خطرناک وائرس پھیلایا جا رہا ہے جو دنیا بھر میں انٹرنیٹ صارفین کو نشانہ بنا رہا ہے ۔

دی میٹرو کی رپورٹ کے مطابق اس میسج میں صارف کا نام ، لفظ video اور صدمے کا اظہار کرنے والا ایموجی شامل ہوتا ہے، لیکن دارصل اس میں کوئی ویڈیونہیں ہوتی۔ اس لنک کو کلک کرتے ہی وائرس آپ کے ڈیوائس میں ڈاﺅن لوڈ ہو جاتا ہے اور پھر آپ کا پرائیویٹ ڈیٹا اس کے رحم و کرم پر ہوتا ہے۔

کمپیوٹر سیکیورٹی کے ماہرین ڈیوڈ جیکوبی نے انٹرنیٹ صارفین کو اس خطرے سے خبردار کرتے ہوئے بتایا ” چند منٹ کے تجزیے سے ہی مجھے اندازہ ہو گیا تھا کہ یہ کتنا بڑا خطرہ ہے۔ یہ وائرس فیس بک میسنجر پر موصول ہونے والے ویڈیو مسیج کی صورت میں پھیل رہا ہے ، جو ملٹی پلیٹ فارم میل ویئر اور ایڈوئیر کو صارفین کے ڈیوائسز میں منتقل کر رہا ہے۔ صارف جب اس پر کلک کرتا ہے تو یہ اسے ایک مشکوک ویب سائٹ کی جانب منتقل کر دیتا ہے جہاں موجود میل وئیر صارف کے براﺅزر اور آپریٹنگ سسٹم کو کنٹرول میں لے کر ناصرف وائرس منتقل کر تا ہے بلکہ قیمتی ڈیٹا بھی چرا لیتا ہے۔ اس خطرے سے محفوظ رہنے کیلئے فیس بک میسنجر پر ویڈیو لنکس کھولنے سے بہر صورت اجتناب کرنا چاہئیے، جب تک کہ اس وائرس کا خطرہ ٹل نہ جائے۔“

مزید :

ڈیلی بائیٹس -