ماہرین نے ستمبر کے مہینہ کو کما د کی کاشت کیلئے انتہائی موزوں قرار دے دیا

ماہرین نے ستمبر کے مہینہ کو کما د کی کاشت کیلئے انتہائی موزوں قرار دے دیا

  

فیصل آباد(بیورورپورٹ)ماہرین زراعت نے کہا ہے کہ ستمبر کا پور امہینہ کما د کی کاشت کیلئے انتہائی موزوں ہے لہٰذ ا کاشتکار بہتر پیداوار کے حصول کیلئے رواں ماہ ستمبر کے پورا مہینہ کے دوران کماد کی کاشت کر سکتے ہیں لیکن اس کیلئے بہتر زمین کا انتخاب ضروری ہے نیز کاشتکار فصل کی کاشت سے قبل ہموار زمین میں گہرا ہل چلا کر مناسب تیاری کے بعد سہاگہ لگائیں اور پھر رجز کے ذریعے 10سے12انچ تک گہری 4فٹ کی کھیلیاں بنائی جائیں ۔

انہوں نے بتایاکہ کمادکی ترقی دادہ اقسام میں سی پی ایف 243، سی پی ایف 246، سی پی ایف 247،ایس ایچ ایف 240، ایچ ایس ایف 242، سی پی 77-400، سی پی 72-2086، سی پی 433-33، سی پی ایف 237 وغیرہ، درمیانی تیار ہونے والی اقسام میں ایس پی ایف 245، 234، 213، ایس پی ایس جی 26وغیرہ کو کاشت کیا جا سکتاہے ۔ انہوں نے کہا کہ کاشتکار ممنوعہ اقسام کی کاشت سے باز رہیں ۔انہوں نے بتایا کہ کاشتکاروں کو کمادکی ممنوعہ اقسام کی کاشت سے روک دیاگیا ہے اور کہاگیا ہے کہ کاشت کار ٹرائی ٹان ، سی او ایل 54، سی او 1148(انڈیا) ، سی او ایل 29، 44، بی ایل 4، ایل 116،118،ایس پی ایف 238اور بی ایف 162وغیرہ کی کاشت سے گریز کریں۔ انہوں نے بتایاکہ ممنوعہ اقسام کی کاشت سے کماد کی پیداوار میں کمی واقع ہو جاتی ہے جس سے کاشتکاروں کو بھاری مالی نقصان کا سامنا کرنا پڑ سکتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ زیادہ پیداوار حاصل کرنے کیلئے کاشتکار صرف کماد کی سفارش کردہ اقسام ہی کاشت کریں تاکہ بعد میں انہیں کسی پریشانی کا سامنا نہ کرنا پڑے ۔

مزید :

کامرس -