متنازعہ بیان، رانا ثناء اللہ کے خلاف اندراج مقدمہ کی درخواست پر ایس ایچ اوتھانہ سول لائنز سے جواب طلب

متنازعہ بیان، رانا ثناء اللہ کے خلاف اندراج مقدمہ کی درخواست پر ایس ایچ ...

  

لاہور(نامہ نگار)سیشن کورٹ میں متنازعہ بیان دینے پرسابق صوبائی وزیر قانون رانا ثناء اللہ کے خلاف اندراج مقدمہ کی درخواست پر سماعت ہوئی ،فاضل جج نے ایس ایچ او تھانہ سول لائنز سے 12 ستمبر تک جواب طلب کر لیاہے۔ایڈیشنل سیشن جج فیاض احمد بٹر نے شہری ایوب کی درخواست پر سماعت کی، درخواست گزار کے وکیل اظہر صدیق نے عدالت میں موقف اختیار کررکھا ہے کہ پاکستان مسلم لیگ (ن) کے راہنما اور سابق وزیررانا ثناء اللہ نے میکاں محمدنوازشریف کے استقبال کو حج کے برابر ثواب قرار دیا اور اسلامی شعائر کا مذاق اڑایا تھا، رانا ثناء اللہ کے اس بیان سے عوام الناس کے مذہبی جذبات مجروح ہوئے ہیں اور ان کایہ بیان تعزیرات پاکستان کی دفعہ 295 اے کے ذمرے میں آتا ہے، تھانہ سول لاینز میں بھی انکے خلاف درخواست دی تاہم کوئی شنوائی نہ ہوئی، درخواست گزار نے استدعا کی کہ عدالت متنازعہ بیان دینے پر رانا ثناء اللہ کے خلاف مقدمہ درج کرنے کا حکم دے۔

مزید :

علاقائی -