خاکوں کا معاملہ اقوام متحدہ میں اٹھانے کا فیصلہ خو ش آئند، حافظ سعید

خاکوں کا معاملہ اقوام متحدہ میں اٹھانے کا فیصلہ خو ش آئند، حافظ سعید

  

لاہور( ایجوکیشن رپورٹر )امیر جماعۃالدعوۃ پاکستان پروفیسر حافظ محمد سعید کی اپیل پرملک بھر کی مساجد میں علماء کرام اورمذہبی جماعتوں کے رہنماؤں نے گستاخانہ خاکوں کے خلاف اور تحفظ حرمت رسولؐ کے موضوع پر جمعہ کے اجتماعات میں خطاب کیا۔ اس موقع پر مذمتی قراردادیں بھی پاس کی گئیں اور ہالینڈ میں گستاخانہ خاکوں کا مقابلہ منسوخ کروانے کیلئے حکومتی کاوشوں کو لائق تحسین قرار دیتے ہوئے اظہار تشکر کیا گیا۔ خطبات جمعہ کے دوران شان رسالت ؐ میں گستاخیوں کے تذکرہ پر زبردست جذباتی ماحول دیکھنے میں آیا۔جماعۃالدعوۃ کے سربراہ حافظ محمد سعید نے جامع مسجد القادسیہ میں ہزاروں افراد کے بڑے اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ وزیر اعظم عمران خان اور ان کی حکومت نے گستاخانہ خاکوں کا مقابلہ منسوخ کروانے کیلئے جو کوششیں کیں اس پر پاکستانی قوم ان کیلئے دعا گو ہے۔ او آئی سی اور اقوام متحدہ میں توہین آمیز خاکوں کی اشاعت کا معاملہ اٹھانے کا فیصلہ خوش آئند ہے۔ حکومت کو چاہیے کہ وہ پاکستان میں بھی تمام انبیاء کی شان میں گستاخی کی سزا کا قانون پاس کروائیں۔ مسلمان جس طرح نبی اکرم ؐ کی شان میں گستاخی برداشت نہیں کرتے اسی طرح حضرت عیسیٰ علیہ السلام کی توہین بھی برداشت نہیں کرتے۔ آپ پاکستان میں یہ قانون بنا کر دلیل کے طور پر دنیا کے سامنے پیش کریں اور پھر عالمی سطح پر تمام انبیاء کی شان میں گستاخی کی سزا کا قانون پاس کروانے کیلئے بھرپور کردارا دا کریں۔ یہ حکومتوں کے کرنے والے کام ہیں۔اس مسئلہ پر تمام مسلمان ملکوں کو اپنا کردار اداکرنا چاہیے۔حافظ سعید کے علاوہ ملک بھر کی مختلف مساجد میں خطبات جمعہ کے دوران مولانا امیر حمزہ،حافظ عبدالرحمن مکی، محمد یعقوب شیخ سمیت دیگر بہت سے علماء نے بھی کفار کی اس مذموم سوچ کی مذمت کی۔ حافظ سعید کی اپیل پرتحریک حرمت رسول ؐ کے چیئرمین مولانا امیر حمزہ نے مرکز خیبر فیصل آباد میں نماز جمعہ کے اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ او آئی سی اور اقوام متحدہ میںآواز اٹھانے کا فیصلہ خوش آئند ہے۔ گستاخانہ خاکوں کا مقابلہ منسوخ کئے جانے پر پاکستانی قوم وزیر اعظم عمران خان اور ان کی حکومت کا شکریہ ادا کرتی ہے۔ مریدکے، کامونکی، گوجرانوالہ، سیالکوٹ، گجرات، جہلم، اسلام آباد، راولپنڈی، پشاور،قصور، اوکاڑہ، ساہیوال، وہاڑی، بورے والا، ملتان، بہاولپور، بہاولنگر، ڈی جی خان، ڈیرہ اسمعیل خان، کراچی، حیدر آباد، سانگھڑ، بدین، کوئٹہ، مظفر آباد، کوٹلی، میرپوراور دیگر شہروں و علاقوں میں بھی نماز جمعہ کے بڑے اجتماعات کا انعقاد کیا گیا۔اس موقع پر جماعۃالدعوۃ کے رہنماؤں پروفیسر ظفر اقبال، حافظ عبدالغفار المدنی،مولانا عبدالعزیز علوی، نصر جاوید،حافظ طلحہ سعید، انجینئر نوید قمر، مولانا غلام قادر سبحانی، ڈاکٹر مزمل اقبال ہاشمی، شیخ فیاض احمد، مولانا رمضان منظور، فیصل ندیم و دیگر نے نماز جمعہ کے اجتماعات سے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ نبی اکرم ؐ کو پیغمبر امن بنا کردنیا میں بھیجا گیا اور ان کی سیرت پر عمل کر کے ہی دنیا میں امن قائم ہو سکتا ہے۔

مزید :

صفحہ آخر -