کوالٹی کنٹرول بورڈ کا ادویات کے14مقدمات ڈرگ کورٹ بھجوانے کا فیصلہ

کوالٹی کنٹرول بورڈ کا ادویات کے14مقدمات ڈرگ کورٹ بھجوانے کا فیصلہ

  

لاہور(جنرل رپورٹر)پراونشل کوالٹی کنٹرول بورڈ ،محکمہ پرائمری اینڈ سکینڈری ہیلتھ کیئرپنجاب کا192واں اجلاسجوہرٹاؤن میں ہواجس کی صدارت ایڈیشنل سیکرٹری ڈرگزکنٹرول محمد سہیل نے کی۔اجلاس میں شرکت کرنے والے دیگر ممبران میں چیف ڈرگزکنٹرولرپنجاب محمد منور حیات، سیکرٹری PQCB فاروق بشیربٹ، پروفیسر ریٹائرڈڈاکٹر محبوب ربانی (پرنسپل جنوبی پنجاب انسٹی ٹیوٹ آف ہیلتھ سائنسز، ملتان ) ، پروفیسر ڈاکٹر محمود احمد (پروفیسرآف فارمیسی ،اسلامیہ یونیورسٹی بہاولپور( ، پروفیسرڈاکٹرارشاد حسین قریشی(کنگ میڈیکل یونیورسٹی لاہور)، پروفیسر ڈاکٹرمنیزہ قیوم(پروفیسر آف فارماکالوجی، فاطمہ جناح میڈیکل یونیورسٹی لاہور)اور پروفیسر ڈاکٹرشہناز اختر (پروفیسر آف فارما کالوجی ، علامہ اقبال میڈیکل کالج لاہور) شامل تھیں۔میٹنگ میں ادویات کے کل 53 کیسز پر کارروائی کی گئی۔کل کارروائی شدہ کیسز میں سے 14کیس ڈرگ کورٹس کو بھجوانے کا فیصلہ کیا گیا, 01 میں ایف آئی آردرج کروانے کی اجازت ، 07 میں متعلقہ ادویہ ساز کمپنیوں کو وارننگ جاری کرتے ہوئے 17کوخارج اور 14 کیسزکی سماعت ملتوی کردی گئی ۔کل غورکردہ کیسز میں ،N.I.H سٹینڈرڈ کے14 کیسز،ریگولر نوعیت کے 38اورنظرِثانی کی درخواست کا 01 کیس شامل تھا۔

کوالٹی کنٹرول

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -