دنیا کی تاریخ کی شرمناک ترین فحش فلم ریلیز کر دی گئی ، اس میں انسان نہیں بلکہ ۔۔۔

دنیا کی تاریخ کی شرمناک ترین فحش فلم ریلیز کر دی گئی ، اس میں انسان نہیں بلکہ ...
دنیا کی تاریخ کی شرمناک ترین فحش فلم ریلیز کر دی گئی ، اس میں انسان نہیں بلکہ ۔۔۔

  

بارسلونا(نیوز ڈیسک) حضرت انسان جیسے جیسے ترقی کی منزلیں طے کرتا جا رہا ہے اس کے اندر کا شیطان بھی ویسے ویسے ہی قدم آگے بڑھاتا چلا جا رہا ہے۔ فحش فلموں کی صنعت کو ہی دیکھ لیجئے، جہاں کئی دہائیاں پہلے رنگین فلموں کا دور شروع ہوا تو ماضی قریب میں تھری ڈی ٹیکنالوجی تک بات پہنچ گئی۔ اب یہ معاملہ اور آگے بڑھ گیا ہے اور پہلی بارانسانوں کے ساتھ روبوٹس بھی ان فلموں میں کام کرتے دکھائی دے رہے ہیں۔

ویب سائٹ ’’ڈیلی سٹار‘‘کے مطابق تفریح بالغاں کی ہسپانوی کمپنی ’’پرائیویٹ‘‘ نے بارسلونا شہر کے مشہور جنسی گڑیوں کے قحبہ خانے ’’لُومی ڈولز‘‘ کے ساتھ مل کر 28منٹ پر مبنی پہلی ایسی فحش فلم بنا دی ہے جس میں روبوٹس کو خواتین کے ساتھ شرمناک حرکات کرتے دیکھا جا سکتا ہے۔

اس فلم کی ریلیز کے موقع پر کمپنی ’’پرائیویٹ‘‘ کی جانب سے جاری کئے گئے بیان میں کہا گیا ہے کہ ’’جنسی روبوٹ اور جنسی گڑیائیں اب فحش فلموں کی انڈسٹری میں داخل ہو گئے ہے۔ وقت گزرنے کے ساتھ یہ رجحان بڑھتا چلا جائے گا۔ یہ ایک نئے دور کا آغاز ہے۔‘‘ جنسی روبوٹس کی پہلی فحش فلم میں کام کرنے والی اداکارہ صوفیہ کا کہنا تھا کہ’’ انسان کی بجائے ایک روبوٹ کے ساتھ کام کرتے ہوئے مجھے یوں محسوس ہو رہا تھا کہ گویا میں مستقبل کی دنیا میں پہنچ گئی تھی۔ یہ بہت ہی انوکھا اور حیران کردینے والا تجربہ تھا۔ مجھے اس بات میں کوئی شک نہیں رہا کہ جلد ہی یہ فلمیں روایتی فحش فلموں سے کہیں زیادہ مقبول ہوجائیں گی۔‘‘

مزید :

ڈیلی بائیٹس -