آدمی نے مردہ خانے سے اپنی ساس کی لاش چُرا لی کیونکہ ۔۔۔

آدمی نے مردہ خانے سے اپنی ساس کی لاش چُرا لی کیونکہ ۔۔۔
آدمی نے مردہ خانے سے اپنی ساس کی لاش چُرا لی کیونکہ ۔۔۔

  

لندن(نیوز ڈیسک) دنیا میں ایسے دامادوں کی کمی نہیں جو اپنی زندہ سلامت ساس کے پاس حاضری دینے سے گھبراتے ہیں مگر برطانیہ میں ایک داماد نے کمال کیا کہ اپنی مُردہ ساس کی لاش چُرا لے گیا۔ معاملہ کچھ یوں ہوا کہ ساس صاحبہ کی وفات کے بعد اُن کی لاش ایک نجی مردہ خانے میں رکھی گئی تھی جس کا مالک نجانے کہاں غائب ہو گیا تھا کہ بار بار کے رابطے پر بھی جواب نہیں دے رہا تھا۔ اس صورتحال پر داماد بہت فکر مند ہوا اور چپکے سے گیا اور مُردہ خانے سے ساس کی لاش اٹھا لایا۔

دی مرر کے مطابق یہ عجیب و غریب واقعہ برطانوی شہر کینٹ میں پیش آیا۔ خاتون کی لاش ’’بٹرفلائی فیونرل سروس ہاؤس‘‘ نامی مردہ خانے میں رکھی گئی تھی۔ لاش چرانے والے داماد کا کہنا ہے کہ اُس نے آخری رسومات کی تیاری مکمل کر لی تھی مگر مردہ خانے کے مالک سے رابطہ نہیں ہو پا رہا تھا۔ اس کا فون بند تھا اور بار بار کی کوشش کے باوجود اُس کی جانب سے کوئی جواب موصول نہیں ہو رہا تھا۔ اس پر داماد نے فیصلہ کیا کہ وہ مُردہ خانے جا کر ساس کی لاش خود ہی اٹھا لاتا ہے۔ وہ اپنے کچھ ساتھیوں کو لے کر گیا اور چپکے سے مُردہ خانے میں داخل ہو کر اپنی ساس کی لاش اٹھا لایا۔ اس کا کہنا تھا کہ مُردہ خانے کے مالک کی غیرذمہ داری کی وجہ سے اُسے یہ کرنا پڑا ورنہ کبھی ایسا کام نہ کرتا۔

یہ واقعہ سامنے آنے کے بعد پولیس نے نجی مُردہ خانے کے خلاف فوری کاروائی کرتے ہوئے اسے بند کر دیا اور اس کے مالک پر پابندی عائد کر دی گئی ہے کہ وہ فیونرل سروسز مزید جاری نہیں رکھ سکتا۔ اہل علاقہ نے اس سے پہلے بھی شکایت کی تھی کہ مُردہ خانے کا مالک غیر ذمہ داری کا مظاہرہ کرتا ہے اور کوئی متوفیان کی آخری رسومات میں تاخیر کا سبب بن چکا تھا، جبکہ ایک آدھ بار تو اس کی عدم دستیابی کی وجہ سے آخری رسوم منسوخ بھی کی گئیں۔ 

مزید :

بین الاقوامی -