سندھ میں بھی یوم عاشور مذہبی عقیدت و احترام سے منایا گیا

   سندھ میں بھی یوم عاشور مذہبی عقیدت و احترام سے منایا گیا

  

 کراچی(اسٹاف رپورٹر)ملک بھر کی طرح کراچی سمیت سندھ میں بھی یوم عاشور مذہبی عقیدت و احترام سے منایا گیا۔تفصیلات کے مطابق نواسہ رسول ؓحضرت امام حسین اور ان کے ساتھیوں کی اسلام کی سربلندی اور حق و صداقت کے لیے میدان کربلا میں دی گئی عظیم قربانی کی یاد میں کراچی سمیت سندھ بھر میں یوم عاشور10 محرم الحرام کو مذہبی عقیدت و احترام سے منایا گیا۔یوم عاشور کے موقع پر سندھ کے تمام چھوٹے بڑے شہروں، قصبوں میں جلوس نکالے گئے، مرکزی امام بارگاہوں سے نویں اور دسویں محرم کی درمیانی شب برآمد ہونے والے مرکزی جلوس اپنے روایتی راستوں سے گزرتے ہوئے اختتام پزیدہوئے جس کے بعد شام غریباں کی محافل منعقد کی گئیں۔اتوارکوکراچی میں 10 محرم الحرام کا مرکزی جلوس نشتر پارک سے برآمد ہوکر روایتی راستوں سے ہوتا ہوا حسینیہ ایرانیان کھارادر پر اختتام پذیر ہوا۔جلوس کی سیکیورٹی پر پولیس اور رینجرز کی بھاری نفری تعینات رہی، شہر میں موبائل فون سروس جزوی طور پر معطل اور ڈبل سواری پر پابندی عائد تھی۔کراچی میں 10 محرم الحرام کی مرکزی مجلس نشتر پارک میں ہوئی، مجلس سے علامہ شہنشاہ نقوی نے خطاب کیا۔خطاب میں انہوں نے نواسہ رسولﷺ، حضرت حسین رضی اللہ تعالی عنہ کی عظیم قربانی اور تعلیمات پر روشنی ڈالی، جس کے بعد جلوس کے شرکا نے تبت سینٹر پر نماز ظہرین ادا کی۔جلوس کی سیکیورٹی کے لیے ایم اے جناح روڈ کے اطراف کی تمام گلیوں کو کنٹینرز لگا کر بند کیا گیا ہے، راستے میں آنے والی تمام دکانیں اور کاروباری مراکز کو سیل کیا گیا ہے۔وزیر اعلی سندھ مراد علی شاہ، اور ڈی جی رینجرز عمربخاری نے جلوس کادورہ کیا اور انتظامات کا جائزہ لیا۔

مزید :

صفحہ آخر -