”بابراعظم فیلڈ میں موجود تو تھے مگر انہیں معلوم نہیں تھا کہ۔۔۔“ مایہ ناز بلے باز پر بطور کپتان تنقید کا سلسلہ شروع، شعیب اختر نے آڑے ہاتھوں لے لیا

”بابراعظم فیلڈ میں موجود تو تھے مگر انہیں معلوم نہیں تھا کہ۔۔۔“ مایہ ناز ...
”بابراعظم فیلڈ میں موجود تو تھے مگر انہیں معلوم نہیں تھا کہ۔۔۔“ مایہ ناز بلے باز پر بطور کپتان تنقید کا سلسلہ شروع، شعیب اختر نے آڑے ہاتھوں لے لیا

  

لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن) پاکستان ون ڈے اور ٹی 20 ٹیم کے کپتان بابراعظم کی بطور بلے باز تو ہر کوئی تعریف کرتا ہے مگر انگلینڈ کے ہاتھوں ٹی 20 میچ میں شکست کے بعد بطورکپتان تنقید کا سلسلہ شروع ہو گیا ہے۔ 

تفصیلات کے مطابق واحد پاکستانی ان فارم بیٹسمین بابر اعظم کو اب اپنے کھیل کے ساتھ قیادت کا اضافی بوجھ بھی اٹھانا پڑرہا ہے، انگلینڈ کیخلاف دوسرے ٹی 20 میں نصف سنچری سکور کرنے کے باوجود ٹیم کو میچ نہ جتوانے پر بطور کپتان وہ تنقید کی زد میں آ گئے اور اس طرح ان کی اصل آزمائش بھی شروع ہو گئی ہے۔ 

قومی ٹیم کے سابق فاسٹ باﺅلر شعیب اختر نے بابراعظم پر تنقید کرتے ہوئے کہا کہ وہ فیلڈ میں موجود تو تھے تو مگر انہیں معلوم نہیں تھا کہ کرنا کیا ہے، ان کیلئے ضروری ہے کہ وہ فیلڈ میں اپنی مرضی کے فیصلے کریں تاکہ مستقبل میں ایک اچھے کپتان کے طور پر سامنے آ سکیں، بابراعظم کو سمجھنا چاہے کہ ان کو جو مواقع اب مل رہے ہیں وہ زندگی بھر نہیں ملتے رہیں گے، اس لئے انہیں ان سے ہی زیادہ سے زیادہ فائدہ اٹھانا چاہیے۔

شعیب اختر نے بڑے سکور کے باوجود شکست پر پاکستان ٹیم کو شدید تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ اس وقت پاکستان ٹیم بائیو ’ان سیکیور‘ ببل میں کرکٹ کھیل رہی ہے، اس وقت ہر کرکٹر غیرمحفوظ ہے، کسی کو بھی معلوم نہیں کہ کیا وہ ایک اچھا کپتان یا اچھی برانڈ بننا چاہتا ہے یا نہیں، سلیکشن، مینجمنٹ، کپتان، ٹیم اور ہر چیز کنفیوژن کا شکار ہے، ٹیمیں اس طرح نہیں بنا کرتیں۔

مزید :

کھیل -