کراچی،قتل ہونیوالا رینجرز کا برطرف اہلکار ڈکیت نکلا

کراچی،قتل ہونیوالا رینجرز کا برطرف اہلکار ڈکیت نکلا

  

کراچی(این این آئی) رینجرز کا برطرف اہلکار اپنی موت کے ساتھ منظم ڈکیت گروپ کا پتہ دے گیا، پولیس کے مطابق واقعے کا مقدمہ درج کرکے ملزم کی تلاش جاری ہے۔کراچی کے علاقے لیاقت آباد نمبر چار ارم بیکری کے قریب گزشتہ روز قتل ہونے والے رینجرز کے برطرف اہلکار عرفان صدیقی سے متعلق اہم انکشافات سامنے آنے لگے ایس ایس پی سینٹرل کے مطابق رینجرز کا برطرف اہلکار ڈکیت تھا، پولیس نے اس کے دو ساتھی گرفتار کر لیے۔عرفان اپنے ساتھیوں کے ہمراہ لوٹ مار کی وارداتیں کرتا تھا۔ ملزم نے چند ماہ قبل لیاقت آباد کے ایک گھر میں ڈکیتی کی تھی، جس میں پانچ تولہ سونا اور کیش لوٹا تھا۔ایس ایس پی غلام مرتضیٰ کے مطابق مقتول عرفان کے اپنے ساتھی حمزہ سے اختلافات چل رہے تھے۔ ایک ڈکیتی کے دوران مطلوبہ سامان نہیں ملا، جس پر عرفان نے حمزہ کو ایک ہزار روپے دئیے تھے  اس بات پر حمزہ، عرفان سے ناراض تھا اور پھر ممکنہ طور پر اس نے قتل کردیا۔پولیس نے واقعہ کا مقدمہ درج کرکے فرار حمزہ کی تلاش شروع کردی   اس سلسلے میں چھاپے بھی مارے جارہے ہیں۔

رینجرز اہلکار 

مزید :

پشاورصفحہ آخر -