کروناسے 3ہلاکتیں: ملتان ویکسی نیشن سنٹرز کی تعداد بڑ ھانے کا فیصلہ 

کروناسے 3ہلاکتیں: ملتان ویکسی نیشن سنٹرز کی تعداد بڑ ھانے کا فیصلہ 

  

ملتان ڈیرہ،چوبارہ،راجن پور،کوٹ ادو،چوک سرور شہید،چوٹی زیریں (سٹی رپورٹر، تحصیل رپورٹر،سپیل رپورٹر،نمائندہ خصوصی)نشتر ہسپتال ملتان میں گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران کورونا میں مبتلا کوئی  مریض جاں بحق نہیں ہوا ہے۔جس کے بعد اموات کی مجموعی  تعداد 888  تک برقرار رہی ہے۔تفصیل کے مطابق نشتر ہسپتال کے آئی سو لیشن وارڈز میں گزشتہ چوبیس گھنٹوں کے دوران کورونا میں مبتلا کوئی(بقیہ نمبر15صفحہ6پر)

 مریض جاں بحق نہیں ہوا،یوں یکم اپریل 2020  سے 31 اگست  2021 کے درمیان کورونا کے باعث ہونے والی اموات کی مجموعی تعداد 888   ہے،جبکہ نشتر ہسپتال میں زیر علاج کورونا کہ مریضوں کی تعداد 21 ہو گئی ہے جن میں سے 14 مریضوں کا تعلق ملتان سے ہے,جبکہ کورونا کے شبہ میں 100 مریض زیر علاج ہیں جن کی رپورٹس کا انتظار  ہے،ادھر رواں سال نشتر ہسپتال میں کورونا کے شبہ میں 7ہزار 514 افراد رپورٹ ہوئے جن میں سے 2 ہزار 842افراد میں کورونا کی تصدیق ہوئی ہے دریں اثناء کمانڈ اینڈ کنٹرول سینٹر سول سیکرٹریٹ ساوتھ پنجاب کی جانب سے جاری کردہ اعدادوشمار کے مطابق ملتان میں 132، وہاڑی میں 08,  لودھراں میں 06،خانیوال میں 12،  بہاولپور میں 57, بہاولنگر میں 09، رحیم یار خان میں 37، مظفر گڑھ میں 17، ڈیرہ غازیخان میں 70،   لیہ میں 44 اور   راجن پور میں 28 نئے کیس سامنے آئے ہیں، یوں مجموعی طور ملتان سمیت جنوبی پنجاب میں کورونا کے 420 نئے کیسز سامنے آئے ہیں، چوک سرور شہید ٹی ایچ کیو ہسپتال میں بنائے گئے واحد ویکسین سینٹر پر ویکسین لگوانے والے شہریوں کا رش بڑھ گیا ہے جب کہ خواتین اور مردوں کا مشترکہ سینٹر ہونے کی وجہ سے خواتین اور مردوں میں دھکم پیل بڑھ گئی ہے جب کہ شدید رش کی وجہ سے نہ تو شہریوں نے ماسک لگائے ہیں اور نہ ہی سماجی فاصلے کا خیال رکھا جا رہا ہے ہسپتال کا عملہ نا کافی ہونے کی وجہ سے ایس او پیز کی کھلم کھلا خلاف ورزی کی جارہی ہے جس کی وجہ سے کرونا پھیلنے کا خدشہ بڑھ گیا ہے جبکہ اس رش کی وجہ جاننے کے لیے جب شہریوں سے پوچھا گیا ان کا کہنا تھا کہ اگر ویکسین نہ لگوائی تو حکومت نے موبائل سمز بند کردینی ہیں شہریوں نے محکمہ صحت کے اعلی حکام ڈی سی مظفر گڑھ سے خواتین اور مردوں کے لیے الگ الگ کاؤٹر قائم کرنے اور ویکسین لگانے والے عملے میں اضافے کی اپیل کی ہے۔ڈیرہ غازی خان اور کوٹ چھٹہ میں کورونا ایس او پیز پر عملدرآمد نہ کرانے پر ایک ہوٹل سمیت 11 دکانیں سر بمہر کردی گئیں۔ڈپٹی کمشنر ذیشان جاوید کی ہدایت پر اسسٹنٹ کمشنرز نے مارکیٹوں کے معائنہ کے دوران کارروائی کی۔اسسٹنٹ کمشنر صدر مہدی ملوف نے کمیٹی گولائی میں ماسک نہ پہننے پر سات دکانیں سر بمہر کرادیں۔اسسٹنٹ کمشنر کوٹ چھٹہ محمد اسد چانڈیہ نے لکھ داتا موسی خان ہوٹل سمیت چار دکانیں سیل کرادیں۔انہوں نے سخی سرور میں کورونا ویکسی نیشن سنٹر کا بھی معائنہ کیا۔ویکسین لگوائیں ورنہ سم کارڈ بند ہوگا،حکومتی دھمکی کام آگئی، کوٹ ادو میں قائم کورونا ویکسی نیشن سنٹر پر عوام کا رش، ویکسین بھی کم پڑ گئی،ایس او پیز کو بھی نظر انداز کیا جانے لگا،اس بارے تفصیل کے مطابق  ویکسین نہ لگوانے والوں کوحکومتی دھمکیاں خوف زدہ کر گئیں،سم بند،محکمہ مال میں ریکارڈ بلاک،سکول کالجز میں داخلے پر پابندی سمیت  اگلے ماہ پیسوں کے عوض ویکسین  لگانے کے اعلانات پر شہریوں کی بڑی تعداد کوٹ ادو جناح ہال اورتحصیل ہیڈ کوارٹر ہسپتال  میں قائم ویکسی نیشن سنٹر پہنچ گئی جہاں ویکسین  بھی کم پڑ گئی ہے، مخصوص تعداد میں افراد کو ہال کے اندر داخل کیا جارہا ہے جبکہ  شہریوں کی بڑی تعداد باہر قطار میں کھڑی ہے،کورونا ایس او پیز کو بھی نظر انداز کردیا گیا اورسماجی فاصلے کا بھی خیال نہیں رکھا جارہاجو کہ عوام کا ہجوم کورونا پھیلنے کا سبب بھی بن سکتا ہے، ذرائع کے مطابق حکومت کی جانب سے کورونا ویکسی نیشن نہ کروانے کی صورت میں موبائل فون سم بند کرنے کے اعلان کے بعدشہریوں کی بڑی تعداد نے ویکسی نیشن  سنٹر کا رخ کیا ہے۔راجن پور میں کورونا وائرس کی چوتھی لہر کی شدت میں اضافہ   ضلع میں کورونا وائرس کے مریضوں میں تشویشناک حد تک اضافہ جاری ہے۔ ضلع میں گزشتہ 24 گھنٹے کے دوران کورونا وائرس کے28نئے کیسز رپورٹ۔  کورونا کے ایکٹیو کیسز کی تعداد 220ہوگئی ہے۔ ضلع میں آج پازیٹیو کورونا کی شرح 4.36فی صد رہی ہے۔ تحصیل ہیڈکوارٹرہسپتال چوبارہ میں کورونا ویکسینیشن سنٹر شہریوں کے لئے وبال جان بن گیاشہری ویکسین لگوانے کے لئے ذلیل و خوار کورونا ایس او پیز بھی نظر انداز کورونا پھیلنے کا خدشہ شہریوں کا وزیر صحت سے بھی نوٹس لینے کا مطالبہ لیہ کی پسماندہ صحرائی تحصیل ہیڈکوارٹرہسپتال چوبارہ میں کورونا وائرس سے بچاو کی ویکسین لگوانے کے لئے دور دراز سے آئے شہری ذلیل و خوار ہونے لگے۔۔۔ویکسین کے لئے آنے والے افراد نے ویکسینیشن سنٹر کے سامنے احتجاج کرتے ہوئے کہا ایک تو پہلے ہی عملہ کم ہے دوسرا ویکسین لگانے والا عملہ زیادہ تر غائب رہتے ہے۔۔جس سے دور دراز سے آئے لوگوں کو شدید مشکلات کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔۔۔۔ویکسینیشن سنٹر پر کورونا ایس او پیز کو مکمل طور پر نظر انداز کیا جا رہا ہے جس سے کورونا وائرس پھیلنے کا بھی خدشہ بڑھ گیا ہے۔۔۔۔شہریوں نے وزیر صحت سے نوٹس لے کر صورتحال کو بہتر بنانے کا مطالبہ کیاہے۔ ٹیچنگ ہسپتال ڈی جی خان کے فوکل پرسن ڈاکٹر خالد تحسین نے بتایا کہ ٹیچنگ ہسپتال کے کرونا وارڈ میں داخل48 مریضوں میں سے دو خواتین جنتاں مائی،سکینہ اور ایک مر د وسن خان جاں بحق ہو گئے،17 نئے مریضوں کے کروناکیسز مثبت جبکہ ہسپتال میں داخل 26 مریضوں میں کرونا کا خدشہ پایا جارہا ہے اور 4 مریضوں کی حالت انتہائی خطرناک ہے فوکل پرسن ڈاکٹر خالد تحسین نے کہا کہ کرونا ایک خطرناک وباء ہے حکومتی ایس او پیز پرعمل کرکے اس سے محفوظ رہاجاسکتا ہے شہری حکومتی ایس اوپیز پر عملدرآمد یقینی بنائیں خود بھی محفوظ رہیں اور دوسروں کوبھی محفوظ رکھیں۔دریں اثناء کمشنر ملتان ڈویژن ڈاکٹر ارشاد احمد اور ڈپٹی کمشنر عامر کریم خاں نے صحت و تعلیم کے شعبوں کی کارکردگی کا جائزہ لینے کیلئے شہر کے مختلف تعلیمی اداروں اور ہیلتھ مراکز کا دورہ کیا۔اس سلسلے میں کمشنر ارشاد احمد اور ڈپٹی کمشنر عامر کریم خاں نے شہباز شریف ہسپتال کا دورہ کیااس موقع پر کمشنر نے شہریوں کو دستیاب صحت کی سہولیات کا جائزہ لیا اور کرونا ویکسی نیشن سنٹرز بڑھانے کا حکم دیا۔کمشنر نے حکم دیا کہ مریضوں کیلئے مفت ادویات اور علاج و معالجہ یقینی بنایا جائے گا تاکہ حکومت کے وژن پر صحیح معنوں میں عملدرآمد کرایا جاسکے۔قبل ازیں ڈپٹی کمشنر نے دورے کے دوران ہسپتال کی فارمیسی میں ادویات کے سٹاک کی انسپکشن کی اور کہا کہ شہباز شریف ہسپتال اور گائنی ہسپتال کو مثالی علاج گاہ بنائیں گے۔بعد ازاں کمشنر اور ڈپٹی کمشنر نے پائلٹ سیکنڈری سکول کا بھی دورہ کیا۔کمشنر ارشاد احمد نے کلاس رومز میں بچوں کیلئے سہولیات کا جائزہ لیا اور طلبائکو کرونا ویکسین کی افادیت کے حوالے سے لیکچر بھی دیا۔کمشنر ملتان کا کہنا تھا کہ طلبائاپنے والدین کو کرونا ویکسین لگوانے کیلئے قائل کریں تاکہ اس موذی مرض کا خاتمہ کیا جاسکے۔علاوہ ازیں کمشنر ارشاد احمد اور ڈپٹی کمشنر عامر کریم خاں نے گرلز کالج چونگی نمبر 14 کا بھی دورہ کیا اور تعلیمی سہولیات کا جائزہ کیا۔کمشنر اور ڈپٹی کمشنر نے پائلٹ سیکنڈری سکول اور گرلز کالج میں شجرکاری مہم کے سلسلے میں پودے بھی لگائے اور ملکی سلامتی کیلئے دعا مانگی۔جبکہکمشنر ملتان ڈویژن ڈاکٹر ارشاد احمد اور ڈپٹی کمشنر عامر کریم خاں نے گزشتہ روز ہیلتھ مراکز کے دوروں کے دوران ہیلتھ سنٹر ٹبہ مسعود پور میں صحت کی سہولیات کا جائزہ لینے کیلئے۔ انسپکشن کی اس موقع پر ناقص کارکردگی پر ہیلتھ سنٹر ٹبہ مسعود پور کے میڈیکل افسر کو شوکاز نوٹس بھی جاری کیا گیا۔کمشنر کے احکامات پر ڈپٹی کمشنر عامر کریم خاں نے ادویات سٹور کا ریکارڈ مرتب نہ ہونے پر ڈسپنسر کیخلاف انکوائری کے احکامات بھی جاری کئے اور میڈیکل افسر ڈاکٹر اظہر کو دو ہفتے میں معاملات بہتر کرنے کی ڈیڈ لائن دی۔کمشنر کا کہنا تھا کہ ہیلتھ سنٹرز پر گائنی سمیت میڈکل کی جدید سہولیات کی فراہمی یقینی بنانے کیلئے ترجیحی بنیادوں پر اقدامات کررہے ہیں۔انہوں نے کہا کہ دیہی علاقوں میں ادویات اور میڈیکل ٹیسٹ سمیت تمام سروسز فراہم کی جارہی ہیں تاہم حکومت پنجاب کے سہولیات کے ثمرات عوام تک پہنچانے کیلئے محکمہ صحت کے افسران مزید محنت کریں۔اس موقع پر ڈپٹی کمشنر نے شہریوں سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ شہری ہیلتھ مراکز پر زیادہ سے زیادہ کرونا ویکسینیشن کرائیں کرونا ویکسین مہم کے دوران پیرا میڈیکل سٹاف سمیت تمام عملہ جانفشانی سے فرائض سر انجام دے۔انہوں نے بتایا کہ محکمہ صحت کو ہیلتھ سنٹر کی رہائش گاہوں اور ڈسپنسری کے معاملات بہتر کرنے کا ٹاسک دیا ہے۔اس موقع پر سی ای او ہیلتھ ڈاکٹر شعیب گورمانی نے تفصیلی بریفنگ بھی دی۔

مزید :

ملتان صفحہ آخر -