کارکنوں پر جھوٹے مقدمے اور گواہیوں پرفیصلے سنائے جارہے ہیں،رحیق عباسی

کارکنوں پر جھوٹے مقدمے اور گواہیوں پرفیصلے سنائے جارہے ہیں،رحیق عباسی

 لاہور(نمائندہ خصوصی)پاکستان عوامی تحریک کے مرکزی صدر ڈاکٹر رحیق عباسی نے مرکزی سیکرٹریٹ میں ہنگامی اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ہمارے کسی کارکن نے پولیس پر حملہ کیا اور نہ ہی قانون ہاتھ میں لیا اس کے باوجود ہمارے بے گناہ کارکنوں پر پولیس نے جھوٹے مقدمے درج کیے اور اب پولیس کی جھوٹی گواہیوں کے نتیجے میں فیصلے سنائے جارہے ہیں،پنجاب میں دوہرا قانون ہے اور سیاسی مخالفین سے جینے کا حق چھیننے کیلئے وزیراعلیٰ ریاستی اداروں کا سیاسی استعمال کر رہے ہیں۔ وزیراعلیٰ انتقامی کارروائیوں اور دہشت گردانہ طرز عمل سے عوامی تحریک کے کارکنوں کو خائف نہیں کر سکتے ۔انہوں نے کہا کہ اینٹی ٹیررازم کورٹ فیصل آباد کی طرف سے ہمارے گوجرہ کے کارکنوں کو سنائی جانے والی سزا کے خلاف آج لاہور ہائیکورٹ سے رجوع کر رہے ہیں، یہ سزائیں پولیس کی طرف سے درج کیے گئے جھوٹے مقدمات پر سنائی گئیں۔ وزیراعلیٰ پنجاب سانحہ ماڈل ٹاؤن کی قتل و غارت گری کے منصوبہ ساز ہیں اور 14 بے گناہوں کا خون ان کی گردن پر ہے،اپنے جرائم چھپانے اور انجام سے بچنے کیلئے پاکستان عوامی تحریک کے کارکنوں کو سزائیں دلوارہے ہیں ،ہمیں ہراساں کر رہے ہیں مگر ہم حکمرانوں کے اوچھے ہتھکنڈوں سے نہ پہلے ڈرے نہ آئندہ ڈریں گے۔

مزید : علاقائی