پنجاب حکومت کا مشتعل ہجوم سے نمٹنے کیلئے جدید ترین ٹیکنالوجی، آلات خریدنے کا فیصلہ

پنجاب حکومت کا مشتعل ہجوم سے نمٹنے کیلئے جدید ترین ٹیکنالوجی، آلات خریدنے کا ...
پنجاب حکومت کا مشتعل ہجوم سے نمٹنے کیلئے جدید ترین ٹیکنالوجی، آلات خریدنے کا فیصلہ

  


لاہور (ویب ڈیسک) پنجاب پولیس نے پرتشدد مظاہرین، مشتعل ہجوم سے نپٹنے اور خون خرابے سے بچنے کیلئے ترقی یافتہ ممالک کی ٹیکنالوجی و طریقہ کار سے استفادہ کرنے اور جدید آلات کی خریداری کا فیصلہ کیا ہے۔ سانحہ ماڈل ٹاﺅن اور سانحہ یوحنا آباد میں ہلاکتوں اور اربوں روپے مالیت کی املاک کے نقصان پر پولیس کی جانب سے مظاہرین کو کنٹرول کرنے میں ناکام نظر آئی۔ پولیس منصوبوں کے مطابق واٹرکینن گنز کے ذریعے مظاہرین پر سادہ پانی کی بجائے سرخ رنگ ملا کر پانی پھینکا جائیگا تاکہ مظاہرین کہیں بھی فرار ہونے کی کوشش کریں تو ان پر گرا سرخ رنگ دیکھ کر ان کی شناخت ہوسکے اور انہیں پکڑا جاسکے۔ اس کے علاوہ عام پانی کی بجائے واٹرکینن گنز میں لیکوئڈ گیس بھی شامل کی جائیگی تاکہ مظاہرین پر جلد قابو پایا جاسکے۔ اہلکاروں کو لانگ رینج ساﺅنڈ ڈیوائس بھی دی جائیگی جو شور پیدا کریگی جس سے مظاہرین کو پریشانی ہوگی۔ مظاہرین کو کنٹرول کرنیوالے پولیس کے سپیشل دستے کو ٹیئرز گنز اور سٹن گن سے کرنٹ کا جھٹکا لگنے والا شخص 10 منٹ تک بے ہوش یا پھر ساکت ہوکر گر پڑیگا مگر اسے کوئی جسمانی نقصان نہیں پہنچے گا۔ ذرائع کے مطابق پہلے مرحلے میں یہ سپیشل اینٹی رائٹ فورس قائم کرنے کیلئے 5 سو اہلکاروں کا انتخاب کیا جارہا ہے جس کے بعد تربیت اور آلات کی خریداری کا مرحلہ مکمل کیا جائیگا۔ لاہور کے بعد اس سپیشل فورس کو دیگر اضلاع میں بھی تعینات کیا جائیگا۔

مزید : لاہور


loading...